بین المذاہب ہم آہنگی سے انتہا پسندی، دہشتگردی کو شکست دی جا سکتی ہے: صادق سنجرانی اسد قیصر

بین المذاہب ہم آہنگی سے انتہا پسندی، دہشتگردی کو شکست دی جا سکتی ہے: صادق ...

  



اسلام آباد(آئی این پی) چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی اور سپیکرقومی اسمبلی اسد قیصر نے کہا ہے کہ ملک میں دیرپا امن واستحکام کیلئے بین المذاہب ہم آہنگی کو فروغ دیکر ہی انتہاپسندی اوردہشت گردی کو شکست دی جاسکتی ہے، اس لیے ملک میں مثالی امن کے قیام اور قومی یکجہتی کے فروغ کیلئے مختلف مکاتب فکر کے مابین دوستانہ انداز میں مکالمہ کی اشد ضرورت ہے تاکہ سول سوسائٹی کے تمام طبقات اور مکاتب فکر کی معاونت سے پیغام پاکستان بیانیہ کے اہم مقاصد حاصل کیے جاسکیں۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہارپیغام پاکستان سنٹر برائے امن، مصالحت و تعمیر نو سٹڈیزاور بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی اسلام آباد کے شعبہ اسلامک ریسرچ انسٹی ٹیوٹ کے زیراہتمام قازقستان کے بین المذاہب اور بین التہذیب مکالمہ کے ادارہ نذر بائیف سنٹر فارڈویلپمنٹ کے تعاون سے سائبان پاکستان عالمی کانفرنس برائے بین المذاہب مکالمہ و قومی یکجہتی کے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ صادق سنجرانی نے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گردی اور انتہاپسندی کے مقابلہ اور سدباب کیلئے پیغام پاکستان بیانیہ انتہائی کلیدی حیثیت کا حامل ہے جوکہ پاکستان کے تمام مذہبی مسالک کے نامور علمائے کرام اورمفتیان عظام کی پوری علمی تحقیق سے متفقہ طور پر مرتب کیا گیا ہے۔ ا نہوں نے کہا کہ پیغام پاکستان بیانیہ ملک کو نفرتوں، تعصبات سے نجات دلانے اور امن و استحکام کی جانب گامزن کرنے کا بہترین راستہ ہے جبکہ ہمارے معاشرہ میں بڑھتی ہوئی انتہاپسندی اور عدم رواداری سے نمٹنے کیلئے سائبان پاکستان پروگرام ایک بہترین ذریعہ ہے۔ قومی اسمبلی کے سپیکر اسد قیصر، قازقستان نورسلطان سٹی کے بین المذاہب مکالمہ بورڈ، نذربائیف سنٹرکے آرگنائزنگ بورڈ کے چیئرمین استائے ابیبلائف، قومی اسمبلی کے رکن رومینہ خورشید عالم اور صوبائی اسمبلی کی رکن رمیش سنگھ اروڑہ نے سائبان پاکستان پروگرام کی اہمیت، آفادیت اور ضرورت کو اجاگر کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے آئین میں تمام شہریوں کو رنگ ونسل اور مذہب و عقیدہ کے ماوری ہوکر مساوی شہری حقوق اور مذہبی آزادیوں کی ضمانت دی گئی ہے، اس لیے پاکستان میں مذہبی بنیادوں پر پھیلائی گئی منافرتوں کا مکمل طور پر خاتمہ کرنے کیلئے پیغام پاکستان کی روح کے عین مطابق ایسا عادلانہ مثالی معاشرہ تشکیل دینا ہوگا جس میں ہر شہری کو اپنی جان و مال اور عقیدہ کا مکمل تحفظ حاصل ہو۔ وطن عزیز میں بین المذاہب ہم آہنگی اور امن و استحکام کی آفادیت و ضرورت کو اجاگر کرنے کیلئے اسلامی ریسرچ انسٹی ٹیوٹ اسلام آباد کے تعاون سے بلوچستان رورل سپورٹ پروگرام کے تحت سول سوسائٹی، علمااور میڈیا کے امن کیلئے کردار کے موضوع پر پیر کے روز کوئٹہ میں بھی خصوصی سیمینار کا انعقاد کیا گیا۔ اس سیمینارمیں سول سوسائٹی کے مختلف مکاتب فکر کے نمائندوں، میڈیا سے تعلق رکھنے والے سینئر صحافیوں اور علمائے کرام نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔

صادق سنجرانی

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر