سابق وفاقی وزیر داخلہ چودھری نثار دورہ برطانیہ کے بعد پاکستان پہنچ گئے

سابق وفاقی وزیر داخلہ چودھری نثار دورہ برطانیہ کے بعد پاکستان پہنچ گئے
سابق وفاقی وزیر داخلہ چودھری نثار دورہ برطانیہ کے بعد پاکستان پہنچ گئے

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق وفاقی وزیر داخلہ چودھری نثار دورہ برطانیہ کے بعد پاکستان پہنچ گئے،چودھری نثار پی آئی اے کی پرواز پی کے 786پر لندن سے اسلام آباد پہنچے،چودھری نثار14 روزہ دورے پر برطانیہ گئے تھے،چودھری نثار اسلام آباد ایئرپورٹ سے آبائی گھر کی طرف روانہ ہو گئے۔

واضح رہے کہ لندن میں سابق وزیرداخلہ چودھری نثارسے ملنے کے بارے میں قریبی دوستوں کا مشورہ نواز شریف نے مسترد کردیا۔ چودھری نثار نے بھی واضح کر دیا کہ شریف برادران سے ملاقات کا کوئی امکان نہیں۔نواز شریف کی تیمارداری کے پوچھے گئے سوال پر سینئر سیاستدان نے کہا کہ اس وقت مجھے تیمار داری کی ضرورت ہے۔

لندن میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چوہدری نثار کا کہناتھا کہ میں لندن علاج کےلئے آیا ہوں کوئی سیاسی مقاصد کیلئے نہیں۔ اس وقت جو سیاسی تھیٹر لگا ہے اس پر بات کرنا بے معنی ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ کون آرہا ہے کون جارہا ہے اس پر بات کرنا ضروری نہیں، ملک میں سیاسی عدم استحکام اور معاشی بحران کا خاتمہ ضروری ہے۔

سینئر سیاستدان چوہدری نثار نے کہا ہے کہ مسائل کا حل اسی وقت نکلے گا جب تمام سیاسی قوتیں مل بیٹھ کر بات کریں گی۔ان کاکہناتھا کہ ملک سیاسی اور معاشی عدم استحکام کا شکار ہے جس سے ملک کو نکالنے کی ضرورت ہے اس وقت جو سیاسی تھیٹر لگا ہوا ہے اس پر بحث بے معنی ہے۔انہوں نے کہا کہ سب لوگوں کو پاکستان کے مسائل حل کرنے پر توجہ دینی چاہیے کیونکہ اس وقت پاکستان تاریخ کے گھمبیر ترین مسائل کا شکار ہے۔ اس وقت کون آتا ہے کون جاتا ہے سب غیر متعلقہ بات ہے۔

چوہدری نثار نے کہا کہ کون وزیراعظم بن رہا ہے اور کون وزیر اعلیٰ، یہ باتیں بے کار ہیں تاہم اس وقت ملک کو درپیش سیاسی و معاشی عدم استحکام کا کوئی حل دور دور تک نظر نہیں آتا اور مسائل کا حل اسی وقت نکلے گا جب تمام سیاسی قوتیں مل بیٹھ کر بات کریں۔ پاکستان عدم استحکام سے دوچار ہونے کے قریب ہے۔نواز شریف کی تیمارداری کے پوچھے گئے سوال پر سینئر سیاستدان نے کہا کہ اس وقت مجھے تیمار داری کی ضرورت ہے۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد