پشاورہائیکورٹ،چین میں پھنسے پاکستانی طلبا کی واپسی سے متعلق کیس میں وفاقی اور صوبائی حکومت سے تحریری جواب طلب

پشاورہائیکورٹ،چین میں پھنسے پاکستانی طلبا کی واپسی سے متعلق کیس میں وفاقی ...
پشاورہائیکورٹ،چین میں پھنسے پاکستانی طلبا کی واپسی سے متعلق کیس میں وفاقی اور صوبائی حکومت سے تحریری جواب طلب

  



پشاور(ڈیلی پاکستان آن لائن)پشاورہائیکورٹ نے چین میں پھنسے پاکستانی طلبا کی واپسی سے متعلق کیس میں وفاقی اور صوبائی حکومت سے تحریری جواب طلب کرلیا،چیف جسٹس وقار احمد سیٹھ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ اب تو کرونا وائرس افغانستان اور ایران تک پہنچ گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پشاور ہائیکورٹ میں چین میں پھنسے پاکستانی طلبا کی واپسی سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی،چیف جسٹس پشاور ہائیکورٹ جسٹس وقار احمد سیٹھ کی سربراہی میں بنچ نے سماعت کی،درخواست گزار نے موقف اختیار کیا ہے کہ چین سے جو طالب علم پاکستان فون کرتا ہے انتظامیہ بند کردیتی ہے ۔

ایڈیشنل اٹارنی جنرل کے پی نے کہاکہ طلبا کوو اپس لانا ہماری نہیں وفاق کی ذمہ داری ہے،پشاورہائیکورٹ نے وفاقی اور صوبائی حکومت سے تحریری جواب طلب کرتے ہوئے کیس کی سماعت 16 مارچ تک ملتوی کردی، چیف جسٹس وقاراحمد سیٹھ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ اب تو کرونا وائرس افغانستان اور ایران تک پہنچ گیاہے۔

مزید : قومی /علاقائی /خیبرپختون خواہ /پشاور