قبضہ مافیا کیخلاف کریک ڈاؤن، کروڑوں روپے مالیت کی سرکاری اراضی واگذار

    قبضہ مافیا کیخلاف کریک ڈاؤن، کروڑوں روپے مالیت کی سرکاری اراضی واگذار

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


 وہاڑی‘ میلسی ٹبہ سلطان پور (بیورو رپورٹ‘ نامہ نگار‘ تحصیل رپورٹر‘ نمائندہ پاکستان) اسسٹنٹ کمشنر وہاڑی محمد جعفر چوہدری نے چک نمبر 95ڈبلیو بی میں قبضہ مافیا کے خلاف آپریشن اور متعدد پٹرول پمپس کے پیمانہ جات اور قیمتوں کو چیک کیا اسسٹنٹ کمشنر وہاڑی محمد جعفر چوہدری نے قبضہ مافیا سے 5کروڑ35لاکھ 31ہزار روپے مالیت کی 36ایکٹر زرعی اراضی واگزار کرائی اور 3 افراد کو گرفتار کروایا۔ انہوں نے(بقیہ نمبر2صفحہ 6پر)
 اس موقع پر کہا کہ تجاوزات اور قبضہ مافیا کے خلاف بلاتفریق کاروائیاں جاری ہیں غیر قانونی سرکاری اراضی پر قبضوں میں ملوث عناصر کسی رعایت کے مستحق نہیں ہیں بعدازاں اسسٹنٹ کمشنر وہاڑی محمد جعفر چوہدری نے متعدد پٹرول پمپس کے خلاف کریک ڈاؤن بھی کیا انہوں نے اس موقع پر مختلف پٹرول پمپس پر قیمتوں اور پیمانہ جات کو چیک کیا جہانگیر پٹرولیم خانیوال چوک کا پیمانہ کم ہونے پر 50ہزار روپے جرمانہ کیا گیاہے۔ پنجاب حکومت کی ہدایت پر قبضہ گروپوں کیخلاف کاروائی جاری ہیں، اسسٹنٹ کمشنر میلسی عبد الرزاق علی ڈوگر نے 2 مختلف کاروائیوں کے دوران ساڑھے 4 کروڑ مالیت کی 180کنال سرکاری اراضی قبضہ گروپوں سے واگزار کرا لی، پہلی کاروائی کے دوران اسسٹنٹ کمشنر عبد الرزاق علی ڈوگر نے اپنی ٹیم کے ہمراہ چک نمبر156ڈبلیو بی میں موجود 80 کنال سرکاری اراضی پر قابض محمد اقبال اور غلام ناصر کی کاشتہ فصل گندم میں ہل چلوا دیئے اور سرکاری رقبہ کلیئر کر کے مقامی نمبردار کے حوالے کر دیا جبکہ دوسری کاروائی کے دوران انہوں نے اسی چک کے ناجائز قابضین لال حسین اور اس کے ساتھیوں کے قبضہ میں موجود 100 کنال سرکاری زرعی اراضی قبضہ گروپ کے تسلط سے واگزار کرا کے مقامی نمبردار کو سپردار مقرر کر دیا قبضہ گروپوں سے واگزار کرائی گئی زرعی اراضی کی مالیت ساڑھے 4 کروڑ روپے بتائی جاتی ہے اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر عبد الرزاق علی ڈوگر نے کہا کہ حکومت کی ہدایات کی روشنی میں قبضہ گروپوں کیخلاف مہم جاری رہے گی اور ناجائز قابضین کیخلاف قانون کے مطابق سخت ایکشن لیا جا رہا ہے۔
سرکاری اراضی