انٹرنیٹ پر ملاقات اور پھر لڑکی حاملہ ہونے کا ڈرامہ کر کے ایک برس تک آدمی سے پیسے اینٹھتی رہی

انٹرنیٹ پر ملاقات اور پھر لڑکی حاملہ ہونے کا ڈرامہ کر کے ایک برس تک آدمی سے ...
انٹرنیٹ پر ملاقات اور پھر لڑکی حاملہ ہونے کا ڈرامہ کر کے ایک برس تک آدمی سے پیسے اینٹھتی رہی
سورس: Pxhere

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ایڈنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) سکاٹ لینڈ میں ایک آدمی کو ایک رات کے لیے خاتون کے ساتھ تعلق قائم کرنا ایسا مہنگا پڑگیا کہ زندگی میں کبھی کسی اجنبی عورت کی طرف دیکھے گا بھی نہیں۔ میل آن لائن کے مطابق سکاٹ لینڈ کے علاقے پرتھ شائر کے رہائشی جیمی ایٹکن کی 36سالہ خاتون جیکلین مک گووین کے ساتھ ملاقات ایک شادی کی تقریب میں ہوئی تھی۔ دونوں وہاں سے اکٹھے نکلے اور ایک ہوٹل کے کمرے میں رات ایک ساتھ گزاری۔ 

رپورٹ کے مطابق چند ہفتے بعد جیکلین نے دوبارہ جیمی سے رابطہ کیا اور اسے بتایا کہ وہ اس کے بچے کی ماں بننے والی ہے۔ اس کے بعد جیکلین نے جیمی اور اس کی فیملی کو کئی ماہ تک ایسی ذہنی اذیت کا نشانہ بنایاکہ بالآخر جیمی کو اس کے خلاف عدالت سے رجوع کرنا پڑ گیا کیونکہ اس کا حاملہ ہونے بھی بعد ازاں جھوٹ ثابت ہوا تھا۔ جیکلین 9ماہ تک حاملہ ہونے کا ڈرامہ کرتی رہی۔ اپنا بڑھا ہوا پیٹ دکھانے کے لیے اس نے ’پراستھیٹک بمپ‘ (Prosthetic Bump)خرید رکھا تھا جسے پہن کر اس نے جیمی، اس کی والدہ وینڈی اور بھائی وکٹر کے ساتھ ملاقاتیں کی۔ 

 جیکلین نے حتیٰ کہ اس کبھی پیدا نہ ہونے والے بچے کے لیے کھٹولا بھی خرید لیا تھا اور اس کے 300پاﺅنڈ جیمی سے ادا کروائے تھے۔ اس نے اپنے سکین بھی اپنے حاملہ ہونے کے ثبوت کے طور پر جیمی اور اس کی فیملی کو دکھائے۔ بعد ازاں معلوم ہوا کہ اسی دوران جیکلین کی بہن حاملہ تھی اور وہ سکین اس کے تھے۔ جیکلین اس سارے عرصے میں کبھی حاملہ ہی نہیں ہوئی او روہ جان بوجھ کر جیمی اور اس کی فیملی کو پریشان کرتی رہی تھی۔ یہ انکشاف ہونے پر جیمی نے پولیس کو رپورٹ کر دی۔جیمی کا کہنا تھا کہ جیکلین کے ساتھ ایک رات کی ملاقات اس کے لیے بھیانک خواب بن کر رہ گئی۔ جیکلین نے دوران تفتیش اپنے جرم کا اعتراف کر لیا ہے اور اس کے خلاف مقدمے کی کارروائی جاری ہے۔اسے رواں ماہ کے آخر میں سزا سنائی جائے گی۔

 

مزید :

ڈیلی بائیٹس -