باراک اوباما کی 2روزہ دورے پر آج بھارت آمد ،دہلی میں سیکیورٹی انتہائی سخت

باراک اوباما کی 2روزہ دورے پر آج بھارت آمد ،دہلی میں سیکیورٹی انتہائی سخت ...

                          نئی دہلی،واشنگٹن(اے این این،خصوصی رپورٹ)امریکی صدر باراک اوباما 2روز ہ دورے پرآج بھارت پہنچیں گے ، اوباما بھارتی یوم جمہوریہ کی تقریب میں مہمان خصوصی ہوں گے ، دہلی میں سکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات ، بھارتی ایجنسیوں کے ساتھ ساتھ امریکی ایجنسیاں بھی سکیورٹی کو فول پروف بنانے کیلئے سرگرم ۔ تفصیلات کے مطابق امریکی صدر باراک اوباما بھارتی یوم جمہوریہ کی تقریب میں شرکت کیلئے (آج ) نئی دہلی پہنچیں گے ۔ اوباما ائیرفورس ون کل پاکستانی وقت کے مطابق ساڑھے نو بجے نئی دہلی ائیرپورٹ لینڈ کرے گا ۔ امریکی صدر باراک اوباما وسطی دہلی میں واقع راشٹر پتی بھون جائیں گے جہاں مہاتما گاندھی کی یادگار کا دورہ کرنے کے بعد نریندر مودی سے ملاقات اور ریاستی ڈنر میں شرکت امریکی صدر کی آج کی مصروفیات ہونگی ۔ کل دوسرے روزامریکی صدر باراک اوباما بھارتی یوم جمہوریہ کی تقریب میں مہمان خصوصی کے طور پر شرکت کریں گے ۔ اوباما کے دورہ کے موقع پر نئی دہلی میں انتہائی سخت انتظامات کیے گئے ہیں دہلی شہر میں ہزاروں سکیورٹی اہلکار تعینات کیے گئے ہیں دارالحکومت میں پندرہ ہزار سیکورٹی کیمرے نصب ہیں ۔ امریکی خفیہ ایجنسیوں کے اہلکار اور صدر اوباما کی سکیورٹی ٹیم پہلے ہی دہلی پہنچ چکی ہے جبکہ بھارتی خفیہ ایجنسیاں کی سرگرمیوں کا محور بھی صرف اور صرف اوباما کی سکیورٹی بنی ہوئی ہے ۔ صدر اوباما کی بم پروف کار دی بیسٹ بھی دہلی میں ہے ، یوم جمہوریہ کے موقع پر چار سو کلومیٹر کا علاقہ نو فلائی زون قرار دے دیا گیا ۔ امریکا میں فوجی رینک کے انتہائی خطرناک چوبیس سراغ رساں کتے بھی دہلی کے فائیو سٹار ہوٹل میں اپنی ذمہ داریاں نبھانے کے لیے تیار ہیں۔ دوسری طرف امریکی صدر اوباما نے بھارت کا آج سے شروع ہونے والا دورہ مختصر کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے منگل کے روز سعودی عرب پہنچنے کا فیصلہ کیا ہے۔ وہ منگل کے روز ریاض میں مرحوم شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز کے انتقال پر نئے سعودی شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے اظہار تعزیت کریں گے۔صدر اوباما کے بھارتی دورے کے تیسرے روز کی مصروفیات میں کمی کرتے ہوئے آگرہ کے تاج محل کی سیر کا پروگرام منسوخ کر دیا ہے۔اوباما نے اپنی اہلیہ مشعل اوباما کے ساتھ تاج محل منگل کے روز پہنچنا تھا۔ لیکن اب سعودی عرب جانے کے لیے امریکی دفتر خارجہ نے اپنے پروگرام میں تبدیلی اور بھارتی دورہ مختصر کرنے سے آگاہ کر دیا ہے۔ اس سلسلے میں وائٹ ہاوس نے بھی تصدیق کر دی ہے۔

مزید : صفحہ اول