مختلف حادثات میں 3افراد جاں بحق‘ خاتون کی خود کشی

مختلف حادثات میں 3افراد جاں بحق‘ خاتون کی خود کشی

  



کوٹ ادو‘ ٹبہ سلطان پور‘ لڈن‘ رحیم یار خان‘ میلسی (تحصیل رپورٹر‘ نمائندہ پاکستان‘ نامہ نگار‘ سپیشل رپورٹر) اڈا لال میر(کوٹ ادو) سناواں سے آتی ہوئی کار (نمبرlee4505)نے کوٹ ادو سے آتے ہوئے موٹرسائیکل سوار کو کچل ڈالا اور موٹرسائیکل سوار جس کی شناخت (رشید احمد ولد عبدالرحمن(بقیہ نمبر56صفحہ7پر)

بھٹہ) جو کہ ٹھٹھی حمزہ (سناواں) کا رہائشی ہے موقع پر دم توڑ گیا کار اتنی تیز رفتار سے تھی کہ پل سے ہٹ کے نہر کراس کرتی ہوئی دکانوں سے جا ٹکراء اور ٹکرانے کے بعد گڑھے میں جا گری ذرائع کے مطابق تین سے چار افراد کار میں سوار تھے جو کہ شدید زخمی ہوئے ریسکیو 1122 کی ٹیم فورن ہی موقع پر پہنچ گء اور زخمیوں کو تحصیل ہیڈ کواٹر ہسپتال (کوٹ ادو) منتقل کر دیا گیا ہے۔ ٹبہ سلطان پورکے قریب بہاولپور روڑ پر تیز رفتار بس ڈرائیورسے بے قابو ہو کر سامنے جاتے ہوئے ٹرالر سے ٹکراگئی جس کے باعث بس ڈرائیور سمیت5مسافر زخمی ہوگئے حادثہ بس ڈرائیورکی غفلت کے باعث پیش آیا حادثے میں زخمی ہونے والے تمام مسافروں کی حالت خطرے سے باہر بتائی گئی ہے۔ حاصل پور کارہائشی موٹرسائیکل سوار محمد عمران اپنی والدہ کے ہمراہ کچی پکی سے واپس گھر آرہے تھے کہ کریم شاہ کے قریب سامنے سے آنے والے ٹریکٹر ٹرالی نے ٹکر ماردی جس سے موٹرسائیکل سوار عمران شدید زخمی ہوگیا اور اسکی والدہ امیراں بی بی موقع پردم توڑ گئی لڈن پولیس نے ٹریکٹر ٹرالی اور ڈرائیور کو حرست میں لے کاروائی شروع کردی ہے۔ ٹریفک حادثہ میں شدید زخمی ہونے والا 40سالہ شخص ہسپتال میں دم توڑگیا۔ چک75کارہائشی40سالہ شبیر حسین کچھ عرصہ قبل موٹر سائیکل تصادم میں شدید زخمی ہوگیا‘جس کے باعث اس کی کولہے کی ہڈیاں ٹوٹ گئیں‘ورثاء نے طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں 25روز طبی امداد کے باوجود شبیرحسین پیشاب کی بندش کے باعث جانبرنہ ہوپایااور دم توڑگیا جبکہ مختلف حادثات میں شدید زخمی ہونے والے 43 افراد جن میں رحمان کالونی کارہائشی7سالہ آصف علی‘ گلشن اقبال کا3سالہ محمداحمد‘ خیر پور کھڈالی کی34سالہ آصفہ علی‘ حبیب کالونی کی40سالہ سمعیہ بی بی‘ وائرلیس پل کی27سالہ نیلم بی بی‘ اقبال آباد کا45سالہ نور محمد‘ چوک سویترا کا40سالہ امان اللہ‘ اقبال نگر کا 20 سالہ محمدوقار‘ خانپورکا24سالہ یاسر اقبال‘ چک عباس کا45سالہ نوراحمد‘ نوریوالی کا40سالہ محمدارشد‘ لیاقت پورکا35سالہ محمد یعقوب‘ رنگ پور کا48سالہ لونا جی اور ملک پور کارہائشی26سالہ قمر زمان وغیرہ کو ہسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔ گھریلو جھگڑوں سے دلبر داشتہ پانچ بچوں کی ماں نے زہریلی شے کھا کر خود کشی کرلی۔بتایا جاتا ہے محلہ درہٹہ میلسی کے سجاد کے گھر میں وٹہ سٹہ معاملے پر جھگڑا رہتا تھا اس کی بیوی شازیہ جو پانچ بچوں کی ماں ہے نے جھگڑوں سے دلبراشتہ ہو کر زہریلی شے کھالی جس کی وجہ سے وہ اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھی اور اس دنیا سے چل بسی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر