نشے کے عادی قیدیوں کاڈیٹانادرا کے ساتھ منسلک کرنے کی ہدایت

نشے کے عادی قیدیوں کاڈیٹانادرا کے ساتھ منسلک کرنے کی ہدایت

  



لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہورہائی کورٹ نے منشیات کے عادی افراد کی بحالی کے مراکز قائم نہ کرنے کے خلاف دائر درخواست پر ہدایت کی ہے کہ نشے کے عادی قیدیوں کاڈیٹانادرا کے ساتھ منسلک اورطالب علموں کی صحت کا بھی آن لائن ڈیٹا تیارکیا جائے۔فاضل جج نے ریمارکس دیئے کہ ڈیٹاکے ذریعے ہی ان علاقوں کاتعین ہوسکے گاجہاں نشہ فروخت اوراستعمال ہورہاہے۔دوران سماعت ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے سیکرٹری ڈاکٹر سلمان کاظمی نے عدالت کو بتایا کہ نشے کے عادی افراد کی بحالی کے لئے میو ہسپتال لاہور میں بیڈز مختص کئے گئے ہیں،نشے کے مریضوں کاڈیٹا محفوظ کرنے کے لئے محکمہ صحت کا تیارکردہ سافٹ وئیرکانظام بھی نصب کیا گیا ہے،اسی سافٹ وئیرکوسرکاری اورنجی ہسپتالوں کے ساتھ منسلک کیا جاسکتا ہے، سافٹ وئیرکے ذریعے منشیات کے عاد ی افراد کاڈیٹامحفوظ بنایا جا سکتا ہے،جس پر عدالت نے کہا کہ اس سافٹ وئیرکے قابل عمل ہونے سے متعلق عدالت کوآگاہ کیا جائے۔ عدالت نے کہا کہ جیلوں میں بندقیدیوں کی تصدیق کے لئے سافٹ وئیرکانظام اپنایا جائے،قیدیوں کاتمام مصدقہ ڈیٹا نادراکے ساتھ منسلک کیاجائے،نشے کے قیدیوں کی بحالی کے اقدامات کو نادراکے نظام سے منسلک کیاجائے۔

ڈیٹا منسلک

مزید : صفحہ آخر