ہسپتالوں میں پان، گٹکا، چھالیہ اور تمباکو کے استعمال پر پابندی عائد

ہسپتالوں میں پان، گٹکا، چھالیہ اور تمباکو کے استعمال پر پابندی عائد
ہسپتالوں میں پان، گٹکا، چھالیہ اور تمباکو کے استعمال پر پابندی عائد

  



کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)بلدیہ عظمیٰ کراچی کے ہسپتالوں میں پان، گٹکا، چھالیہ اور تمباکو کے استعمال پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کرلیا گیاہے، ڈاکٹروں سمیت طبی و نیم طبی عملے، تیمارداروں کو تمباکو کے استعمال پر جرمانہ کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق  کراچی کے سرکاری سپتالوں میں صفائی کی صورتحال کے پیش نظر تمباکو کے استعمال پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا، پان کی پیکوں سے رنگین سرکاری ہسپتالوں کی دیواریں اس بات کا ثبوت ہیں کہ اسپتالوں میں گٹکا اور تمباکو کثرت سے استعمال کیا جارہا ہے جس میں اسپتال ملازمین بھی شامل ہیں، بلدیہ عظمیٰ کراچی نے ماتحت اسپتالوں میں ہر طرح کے تمباکو کے استعمال پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔بلدیہ عظمیٰ کراچی کی سینئر ڈائریکٹر ہیلتھ اینڈ میڈیکل سروسز ڈاکٹر سلمیٰ کوثر نے کہا ہے کہ میئر کراچی وسیم اختر کی ہدایت پر بلدیہ عظمیٰ کے ماتحت تمام ہسپتالوں میں پان، گٹکا، چھالیہ اور تمباکو نوشی پر پابندی عائد کر دی ہے ابتدائی طور پر خلاف ورزی کرنے والے ملازمین کو ایک ہزار روپے جرمانہ عائد کیا جائے گا اور شوکاز نوٹس جاری کیا جائے گا، اس حوالے سے تمام ہسپتالوں کی انتظامیہ کو احکام دے دیے گئے ہیں جن پر سختی سے عمل کرنے کا کہا گیا ہے، کوشش ہے کہ تمام ہسپتالوں میں فیصلے پر عمل درآمد یقینی بنائیں۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی