خواتین کو بے لباس کرنے کا کیس، گرفتار ہونے والے پانچ دکانداروں کو بڑی خوشخبری مل  گئی

خواتین کو بے لباس کرنے کا کیس، گرفتار ہونے والے پانچ دکانداروں کو بڑی ...
خواتین کو بے لباس کرنے کا کیس، گرفتار ہونے والے پانچ دکانداروں کو بڑی خوشخبری مل  گئی

  

فیصل آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) ملت ٹاؤن کے علاقے میں خواتین کو بے لباس کرنے اور تشدد کے کیس میں  گرفتار پانچوں دکانداروں کی ضمانتیں منظور  ہونے کے بعد جیل سے رہا کردیا گیا ہے۔

فیصل آباد کی مقامی عدالت نے گرفتار ملزمان صدام، یوسف، فیصل، ظہیر اور فقیر محمد کی ضمانتیں منظور کیں۔  ایڈیشنل سیشن جج عرفان حیدر نے مقدمے  سے دفعہ 354 اے بھی ختم کرنے کا حکم دے دیا۔ عدالت سے ضمانت ملنے کے بعد دکانداروں کو  ڈسٹرکٹ جیل سے رہا کردیا گیا۔  

رہائی کے بعد گفتگو کرتے ہوئے دکانداروں نے کہا کہ وہ بے قصور ہیں جس کا ثبوت سامنے آنے والی سی سی ٹی وی فوٹیجز ہیں۔ یہ خواتین چوری کرنے آئی تھیں ، ان کے پیچھے کوئی اور گروہ بھی کام کر رہا ہے، دو ماہ کے دوران بہت زیادہ نقصان ہوا، ہمیں انصاف دیا جائے۔

خیال رہے کہ کچھ عرصہ پہلے فیصل آباد کے علاقے ملت ٹاؤن میں دکانداروں  اور بعض خواتین میں جھڑپ کی ویڈیوز سامنے آنے پر ہنگامہ برپا ہوگیا تھا۔ الزام عائد کیا گیا کہ دکانداروں نے خواتین کو بے لباس کرکے تشدد کیا ہے تاہم واقعے کی سی سی ٹی وی فوٹیجز سامنے آئیں تو ساری حقیقت کھل گئی اور یہ ثابت ہوگیا کہ خواتین نے اپنے کپڑے خود پھاڑے تاکہ اپنی چوری چھپائی جاسکے۔

مزید :

جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -فیصل آباد -