طالبہ پر تشدد کا معاملہ : انکوائری رپورٹ میں سکول کی رجسٹریشن معطل ، جرمانے کی سفارش 

طالبہ پر تشدد کا معاملہ : انکوائری رپورٹ میں سکول کی رجسٹریشن معطل ، جرمانے ...

  

لاہور (کرائم رپورٹر) سی ای او ایجوکیشن لاہور نے نجی سکول میں تشدد کا نشانہ بنائی جانے والی طالبہ کے معاملے کی انکوائری رپورٹ میں سکول کی رجسٹریشن معطل ، 6لاکھ روپے جرمانے اور تشدد کرنے والی طالبات کے نام سکول سے ڈسچارج کرنے کی سفارش کر دی تفصیلات کے مطابق چند روز قبل ڈیفنس میں واقع نجی سکول میں طالبات نے اپنی ایک ساتھی طالبہ کو تشد د کا نشانہ بنایا تھا جس پر محکمہ ایجوکیشن نے انکوائری کمیٹی تشکیل دی تھی جس نے اپنی رپورٹ ڈپٹی کمشنر لاہور کو ارسال کر دی انکوائری رپورٹ کے مطابق سکول کے کیفے ٹیریا کے داخلی راستے پرکیمروں کی تنصیب نہیں تھی اور لڑائی جھگڑا کرنے والی طالبات آپس میں دوست تھیں رپورٹ میں واقعہ کی وجہ بتائی گئی کہ واقعہ سکول سے باہر سٹوڈنٹ پارٹی کی تصاویر والدین کے ساتھ شیئرکرنے پرپیش آیا۔انکوائری افسران نے سکول کو 6لاکھ روپے جرمانہ اورسکول کی رجسٹریشن معطل کرنے کی سفارش کی ہے جبکہ رپورٹ میں تشدد کرنے والی طالبات کے نام سکول سے خارج کرنے کی سفارش کی گئی ہے انکوائری ڈی او زنانہ ایلیمنٹری ایجوکیشن لاہور،ڈپٹی ڈی او کینٹ اورڈپٹی ڈی او ماڈل ٹاﺅن نے کی۔ڈی سی لاہور محمد علی آج (بدھ )سفارشات کی روشنی میں اسکول کی رجسٹریشن معطل کرنے یاجرمانے کافیصلہ کریں گے۔دوسری جانب سکول انتظامیہ نے واقعہ میں ملوث 4طالبات اور تشدد کی شکار طالبہ کو بھی معطل کردیا سکول انتظامیہ نے معاملے کی تحقیقات کے لیے 3رکنی انکوائری کمیٹی بھی تشکیل دیتے ہوئے 10روز میں انکوائری مکمل کرکے رپورٹ جمع کرانے کی ہدایت کی ہے سکول انتظامیہ کا اس حوالے سے موقف ہے کہ طالبات کو واقعے کی انکوائری مکمل ہونے تک معطل کیا گیا انتظامیہ کا کہنا ہے کہ کمیٹی کی تحقیقات کی روشنی میں ذمہ داروں کےخلاف کارروائی کی جائے گی۔

طالبہ تشدد

مزید :

صفحہ آخر -