تعلیم حاصل کرناہر انسان کا بنیادی حق، جہانگیر ترین

تعلیم حاصل کرناہر انسان کا بنیادی حق، جہانگیر ترین

  

لودھراں (نمائندہ پاکستان) ترین ایجوکیشن فاﺅنڈیشن کے بانی جہانگیر ترین نے تعلیم کے عالمی دن کے موقع پر اپنے بیان میں کہا ہے کہ تعیم حاصل کرنا کر انسان کا بنیادی حق ہے۔ تعلیم کے بغیر کوئی قوم ترقی نہیں کرسکتی۔ انہوں نے کہا کہ ترین ایجوکیشن فاﺅنڈیشن کے تحت کم وسائل والے خاندانوں کے بچوں کو اپریل 2010 سے معیاری تعلیم دینے کے جامع پروگرام پر عمل کیا جارہا ہے۔ گزشتہ 12 سالوں کے دوران تقریبا 1 ارب روپے لودھراں سمیت جنوبی پنجاب کے پسماندہ(بقیہ نمبر5صفحہ6پر )

 علاقوں میں بہترین تعلیمی سہولیات کی فراہمی پر خرچ کئے گئے ہیں۔ اس وقت ترین ایجوکیشن فاﺅنڈیشن 226 سکولوں و کالجز کے ساتھ کام کررہی ہے جن کے 60 ہزار سے زائد طلبا و طالبات کو انگلش ، میتھ، سائنس، انفارمیشن ٹیکنالوجی کی معیاری تعلیم اور دیگر سہولیات فراہم کی جارہی ہیں۔ انفارمیشن ٹیکنالوجی کی مقبولیت اور اس کے بڑھتے رجحانات کو دیکھتے ہیں لودھراں شہر میں ایک جدید ترین آئی ٹی ریسورس سنٹر TICER کا قیام عمل میں لایا گیا ہے جس میں نوجوانوں کو ڈیجیٹل سکلز اور انٹرنیٹ سے پیسے کمانے کا ہنر سکھایا جارہا ہے ۔ ترین ایجوکیشن فانڈیشن کے قیام کا مقصد لودھراں کے دیہی علاقوں میں بچوں اور خاص کر بچیوں کو لاہور، اسلام آباد کے اداروں جیسی تعلیمی سہولیات فراہم کرنا ہے۔ ترین ایجوکیشن فاﺅنڈیشن نے لودھراں کے ہائی سکولز میں آئی لیبز کو اپ گریڈ کیا جارہا ہے۔ لودھراں کے 8 ڈگری کالجز میں کمپیوٹر لیبز کو اپ گریڈ کیا گیا ہے ۔ مڈل سکولوں کے لیے موبائل لیبز کی سہولت فراہم کی ہے۔ ان سکولوں میں جدید ترین لائبریریاں اور سائنس لیبز بھی بنائی گئی ہیں۔ ترین ایجوکیشن فاﺅنڈیشن سے منسلک سکولوں میں 20 کے قریب مختلف اصلاحاتی پروگرامز جاری ہیں۔ ترین ایجوکیشن فاﺅنڈیشن نے ٹیچرز ٹریننگ پروگرام شروع کیے ہیں اس کے ساتھ ساتھ بچیوں کے لئے منسٹرل ہیلتھ کا پروگرام بھی شروع کیا ہے جسکو عالمی سطح پر سراہا گیا ہے۔ ان سکولوں میں سپورٹس پر خاص توجہ دی جاتی ہے جس میں تائیکوانڈو، سکریبلز، کرکٹ سمیت مختلف گیمز شامل ہیں۔ ترین ایجوکیشن فاﺅنڈیشن کی کاوشوں سے ضلع لودھراں اس وقت تعلیمی رینکنگ میں نمایاں پوزیشن پر آچکا ہے ۔ جہانگیر ترین نے کہا ہے کہ انشا اللہ لودھراں سمیت جنوبی پنجاب کے بچوں اور بچیوں کو اعلی تعلیم کی فراہمی کے لئے بھرپور کردار ادا کرتا رہوں گا

مزید :

ملتان صفحہ آخر -