آئندہ الیکشن اہم، عمران خان کا ہر فیصلہ قبول، نواب حیات اللہ ترین

آئندہ الیکشن اہم، عمران خان کا ہر فیصلہ قبول، نواب حیات اللہ ترین

  

اڈاذخیرہ(نامہ نگار)این اے 160 سے چئیرمین عمران خان کے فیصلے کا پابند ہوں میرا ہاتھ عمران خان کے کندھے پر ہے کیونکہ یہ ملک و قوم کے وفادار ہیں ان خیالات کا اظہار سابق رکن قومی اسمبلی و تحریک انصاف کے رہنما نواب حیات اللہ خان ترین نے سرنوالی(بقیہ نمبر35صفحہ6پر )

 فارم پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ میں خود این اے 160 سے ایم این اے کا میرا بیٹا برہان اللہ ترین یا نصراللہ ترین پی پی 225 سے اور نواب ظفراللہ ترین پی پی 226 سے پی ٹی آئی کے ٹکٹ پر آئندہ الیکشن میں بھر پور حصہ لیں گے پارٹی کے چئیرمین عمران خان کا فیصلہ حتمی ہو گا اگر انہوں نے ٹکٹ نہ دیا تو جس امیدوار کو وہ نامزد کریں گے میں ان کے ساتھ ہونگا انہوں نے کہا کہ اس وقت حلقے کی عوام کی یہ بد قسمتی ہے کہ جو یونین کونسل کا الیکشن دو مرتبہ نہ جیت سکے وہ ایم این اے کے الیکشن لڑنے کے خواہشمند ہیں یہ جمہوریت ہے جس کا دل چاہے وہ الیکشن میں حصہ لے میری طاقت تو عوام ہیں کیونکہ میں اپنی عوام کے دکھ درد میں ہر وقت شریک رہتا ہوں انہوں نے 34 ایم میں سات قتل ہونے کے واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ اگر مجھے اس تنازعہ کا علم ہوتا تو میں مفاہمت سے اس کو حل کرواتا اس تنازعہ کو ان لوگوں نے خراب کیا جن کی روزی روٹی تھانہ کچہری ہے نواب حیات اللہ خان ترین نے مزید کہا کہ آئندہ الیکشن میں پٹھان گروپ متحد ہو کر الیکشن میں حصہ لے گا اور کامیابی بھی حاصل کرے گا۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -