نئے بھارتی صدر پرنب مکھر جی کی طرف سے افضل گورو کی ِ رحم کی درخواست پر تبصرے سے انکار

نئے بھارتی صدر پرنب مکھر جی کی طرف سے افضل گورو کی ِ رحم کی درخواست پر تبصرے ...

  

نئی دہلی(اے پی پی) بھارت کے نو منتخب صدرپرنب مکھر جی نے بھارتی پارلیمنٹ پر حملے کے جھوٹے مقدمے میںسزائے موت پانے والے کشمیری نوجوان محمد افضل گورو کی معافی کی درخواست پر تبصرہ کرنے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ اپنا عہدہ سنبھالنے اور اس کیس کو سٹڈی کئے بغیر اس بارے میں کوئی رائے نہیں دے سکتے ہیں ۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق پر نب مکھر جی نے ان خیالات کا اظہار بھارت کا13واں صدر منتخب ہونے کے ایک دن بعد ایک میڈیا انٹرویو میں کیا ۔ 2001ءمیں بھارتی پارلیمنٹ پر حملے کے جھوٹے مقدمے میں کشمیری نوجوان محمد افضل گورو کی سزائے موت معاف کرنے کا معاملہ ان کے فیصلے کا منتظر ہے ۔ شیو سینا جس نے صدارتی انتخاب میں پرنب مکھر جی کی حمایت کی ہے نے ان سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ افضل گورو کی رحم کی اپیل مسترد کر دیں ۔ شیو سینا کے سربراہ بال ٹھاکرے نے ایک بیان میں پرنب مکھر جی سے کئی توقعات ظاہر کرتے ہوئے زوردیا ہے کہ وہ افضل گورو کی رحم کی درخواست کو مسترد کردیں ۔انہوںنے پرناب مکھرجی سے مزید کہا کہ وہ اس کام کو ترجیحی بنیادوں پر کریں ۔

مزید :

عالمی منظر -