مقبوضہ کشمیرمیں انسانی حقوق کی بگڑتی ہوئی صورتحال پر اظہار تشویش

مقبوضہ کشمیرمیں انسانی حقوق کی بگڑتی ہوئی صورتحال پر اظہار تشویش

  

لندن (اے پی پی) کشمیر سنٹر لندن کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر پروفیسر نذیر احمد شال نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بگڑتی ہوئی صورتحال پر شدید تشویش کا اظہار کیا ہے۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق لندن میں جاری ایک بیان میں پروفیسر نذیر احمد شال نے آزادی پسند رہنماءمشتاق الاسلام کی کالے قانون پبلک سیفٹی ایکٹ کے تحت گرفتاری کی مذمت کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پبلک سیفٹی ایکٹ اور آرمڈ فورسز سپیشل پاورز ایکٹ جیسے کالے قوانین بھارتی جمہوریت کے چہرے پر بدنما داغ ہیں ۔انہوںنے کہاکہ عالمی برادری کو ان کالے قوانین کی منسوخی کیلئے بھارت پر دباﺅ بڑھانا چاہیے کیونکہ ان قوانین کے ذریعے بھارتی قابض انتظامیہ نہتے کشمیریوں کو ہراساں کررہی ہے اور کشمیری نوجوانوں کو جھوٹے الزامات میں ملوث کیا جارہا ہے ۔ انہوںنے کہاکہ یونیورسٹی کے ایک طالب علم اقبال کو جھوٹے الزامات میں ملوث کیا گیا ہے ۔پروفیسر شال نے کہا کہ گرفتاریاں اور نظربندیوں کے ذریعے کشمیریوں کی تحریک آزادی کو روکا نہیں جاسکتا ہے ۔ انہوں نے بھارتی قیادت پر زور دیا کہ وہ آگے آئے اورکشمیریوں کو ان کا حق خود ارادیت دینے کے لئے سیاسی خواہش کا مظاہرہ کرے ۔

مزید :

عالمی منظر -