بینکنگ عدالت میں ڈیفالٹر شہریوں کیخلاف ریکوری کے دعوے دائر

بینکنگ عدالت میں ڈیفالٹر شہریوں کیخلاف ریکوری کے دعوے دائر

  

لاہور(نامہ نگار)بینکنگ عدالت میں بینک الفلاح نے 3 ڈیفالٹر شہریوں کے خلاف ریکوری کے دعوے دائر کردیئے ہیں،عدالت نے ڈیفالٹر عمران ستار، حامد ناصر اور سبطین حیدر ورک کو نوٹس جاری کر کے 18 اگست کو جواب کے لئے طلب کر لیاہے، بینکنگ عدالت کے جج ظفر اقبال نعیم کی عدالت میں بینک الفلاح کے ریکوری کے دعوے دائر کئے ہیں،بینک کے وکیل کا موقف ہے کہ شیخوپورہ کے رہائشی عمران ستار، حامد ناصر اور سبطین حیدر نے بینک سے کاروبار کیلئے قرض حاصل کیا، قرض کی رقم بر وقت ادا نہ کرنے پر شہریوں کو ڈیفالٹر قرار دیا گیا اور ریکوری نوٹسز کے باوجود بنک کی رقم ادا نہیں کی گئی، عدالت سے استدعاہے کہ بینک ڈیفالٹرز سے رقم کی ریکوری کے لئے 25 لاکھ، 51 ہزار، 813 روپے کی ڈگری جاری کی جائے۔ دوسرے کیس میں بینکنگ عدالت میں بینک ڈیفالٹر کانٹی نینٹل فوڈ کے خلاف بینک الفلاح نے 19 لاکھ 82 ہزار 120 روپے کی ریکوری کا دعویٰ دائر کردیاہے،ریکوری کے دعویٰ میں میسرز کانٹی نینٹل فوڈ ڈی ایچ اے کے شراکت داران کو فریق بنایا گیا ہے بینک کے وکیل کی طرف سے موقف اختیارکیا گیاہے کہ ڈی ایچ اے میں کانٹی نینٹل فوڈ کے صولت اعظم اور وجاہت اعظم نے کاروبار کے لئے قرض حاصل کیا، قرض کی رقم ادا نہ کرنے پر میسرز کانٹی نیٹنل فوڈ کو ڈیفالٹر قرار دیا گیا ڈیفالٹر صولت اعظم اور وجاہت اعظم کو ریکوری کے نوٹسز بھجوانے کے باوجود رقم کی ادائیگی نہیں کی جا رہی، عدلت سے استدعاہے کہ رقم کی ریکوری کے لئے ڈیفالٹرز کے خلاف مذکورہ بالا رقم کی ڈگری جاری کی جائے۔

مزید :

علاقائی -