ٹریفک پولیس نے غریب سائیکل سوار کا 500 روپے کا چالان کیوں کیا؟

ٹریفک پولیس نے غریب سائیکل سوار کا 500 روپے کا چالان کیوں کیا؟
ٹریفک پولیس نے غریب سائیکل سوار کا 500 روپے کا چالان کیوں کیا؟

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) کراچی میں ٹریفک پولیس کے افسر نے سائیکل سوار کومبلغ 520روپے کاچالان کردیا۔ اقبال شاہد نامی  شخص سائیکل پر پھیری لگا کر کھلونے فروخت کرتا ہے۔

نجی ٹی وی  کے مطابق اقبال شاہد کو ون وے کی خلاف ورزی پر 520 روپے کا چالان کیاگیا۔ 

جیو نیوز کے مطابق اس واقعے کی وہاں موجود آفیسرنے ویڈیو بھی بنائی جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ پھیری لگاکر کھلونے  بیچنے والے اقبال کو ٹریفک پولیس اہلکاروں نے روک رکھا ہے۔اقبال کو ٹریفک پولیس کلفٹن کے ٹکٹنگ آفیسر غلام علی جمالی نے ون وے جاتے ہوئے روکا۔

 

سائیکل سوار کا شناختی کارڈ طلب کرکے اسے 500 جرمانہ کیا گیا تاہم موصول ہونے والی ای سلپ میں سائیکل سوارکوٹریفک پولیس کے جرمانے کے کوڈ 70 کے تحت چارج کیا گیا جوکہ موٹر سائیکل سوار کو جرمانے کی دفعہ ہے۔ 

اس سلسلے میں کلفٹن ٹریفک سیکشن کے اسسٹنٹ سب انسپکٹر جاوید کا کہنا ہے کہ سائیکل کا فائن کوڈ نہ ہونے کی وجہ سے موٹر سائیکل کوڈ کے تحت چالان کی سلپ نکالی گئی۔

جیو نیوز کے مطابق  آفیسر سائیکل سوار کو 500 جرمانے کا بتاتا ہے تو غریب پھیری والے کے چہرے کا رنگ اڑ جاتا ہے وہ کہتا ہے ’گھر پر کھانے کو آٹا نہیں ہے، میں 500 روپے کہاں سے لاؤں‘۔

آفیسر کہتا ہے کہ غلط سمت جانے سے جانی نقصان ہوتا ہے جس پر سائیکل سوار معافی مانگتا ہے،  ٹکٹنگ آفیسر کی کوشش کے باوجود سائیکل سوار چالان کی سلیپ وصول نہیں کرتا۔ 

کلفٹن ٹریفک سیکشن کے مطابق یہ جرمانہ غلام علی جمالی نے خود ادا کیا اور سائیکل سوار کو وارننگ کے بعد جانے دیا۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -