پی پی کارکنان کا پی ٹی آئی امیدوار پر تشدد،دھاندلی کا الزام بھی لگا دیا

پی پی کارکنان کا پی ٹی آئی امیدوار پر تشدد،دھاندلی کا الزام بھی لگا دیا
 پی پی کارکنان کا پی ٹی آئی امیدوار پر تشدد،دھاندلی کا الزام بھی لگا دیا

  

نکیا ل(سعدیہ مغل ) پیپلزپارٹی کے کارکنان نے حلقہ ایل اے 9کے پولنگ سٹیشن کے دورے پر آئے تحریک انصاف کے امیدوار آصف حنیف کو تشدد کا نشانہ بنادیا۔پی پی کارکنا ن کی جانب سے آصف حمید پر دھاندلی کا الزام بھی عائد کر دیا گیا۔

نجی ٹی وی سما نیوز کے مطابق پی ٹی آئی کے امیدوارآصف حنیف نکیال میں پولنگ سٹیشن نمبر 144 کے دورے پر آئے تو پی پی کارکنان کی جانب سے ان پر دھاندلی کی کوششوں کا الزام لگا یا گیا ۔ آصف حنیف کے ہمراہ آئے پی ٹی آئی کارکنا ن کی جانب سے پیپلز پارٹی کے خلاف نعرے بازی کی گئی جس کے بعد دونوں جماعتوں کے کارکنان کے درمیان جھگڑ ا شروع ہوگیا اور کارکنان ایک دوسرے پر لاتیں اور مکے برساتے رہے۔ پی ٹی آئی امیدوار آصف حنیف بھی جھگڑے کی زد میں آگئے اور پی پی کارکنان کی جانب سے ان پر تشدد کیا گیا تاہم پولیس نے موقع پر پہنچ کر صورتحال کو کنٹرول کیا۔ادھر ہدا باڑی ہائی سکول میں پی۔ٹی۔آئی اور پی۔پی۔پی کے کارکنان کے مابین پولنگ کے معاملے میں تنازعہ ہوا جس کے باعث پولنگ کا عمل روک دیا گیا ہے۔تاہم اسسٹنٹ کمشنر  نے ہمراہ نفری موقع پر پہنچ کر معاملہ رفع دفع کر کے پولنگ کا عمل دوبارہ شروع کروا دیا ہے۔عوام نے اسسٹنٹ کمشنر  کا شکریہ ادا کیا کہ انہوں نے موقع پر پہنچ کر حالات کو کنٹرول کر کے انتخابی عمل کو یقینی بنایا۔واضح رہے کہ آزاد کشمیر کے عام انتخابات کے لئے آج پولنگ کا عمل جاری ہے ، اور مختلف پولنگ سٹیشنز پر ہوائی فائرنگ اور تصادم کے کافی واقعات سامنے آرہے ہیں۔ کوٹلی میں ہونے والے ایک تصادم میں پی ٹی آئی کے دوکارکنان زندگی کی بازی بھی ہار گئے ہیں۔

مزید :

قومی -