جنوبی کوریا کے ایک جج کی حاضر دماغی کی وجہ سے منشیات میں ملوث مجرم پکڑا گیا

جنوبی کوریا کے ایک جج کی حاضر دماغی کی وجہ سے منشیات میں ملوث مجرم پکڑا گیا
جنوبی کوریا کے ایک جج کی حاضر دماغی کی وجہ سے منشیات میں ملوث مجرم پکڑا گیا

  

سیول(رضا شاہ) جنوبی کوریا کے دارالحکومت سیول کے سوچھو پولیس سٹیشن کے مطابق رات 8 بجے کے قریب اطلاع ملی کے سب وے میں ایک منشیات فروش سوار ہے۔ پولیس نے موقع پر پہنچ کر منشیات کنٹرول ایکٹ کی خلاف ورزی پر 20 سالہ نوجوان کو گرفتار کرلیا۔ تحقیقات کے بعد یہ بات سامنے آئی کہ منشیات فروش کی اطلاع دینے والا کوئی اور نہیں بلکہ ایک حاضر جج ہے جس کو منشیات کے مجرموں کے مقدمات کا وسیع تجربہ حاصل ہے۔ جج کے مطابق جب وہ اپنا کام ختم کر کے سب وے پر اپنے گھر جا رہا تھا تو ساتھ والی نشست پر بیٹھا ہوا شخص مخصوص الفاظ میں منشیات فروشوں کی زبان استعمال کرتے ہوئے لوگوں سے فون پر باتیں کر رہا تھا اور انہیں میسج بھی بھیج رہا تھا اور جج کے منشیات کے مجرموں کے بارے میں وسیع تجربے کی وجہ سے اسے یہ بات محسوس ہوئی کہ یہ منشیات فروش ہے جس کی بنا پر اس نے پولیس کو اطلاع دی۔ پولیس نے مجرم کو گرفتار کرنے کے بعد منشیات خریدنے اور بیچنے کی جگہوں کی تحقیقات شروع کر دی ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -