کوئی طالبان اچھا نہیں، تمام گروپوں کے خلاف کارروائی، ٹھکانے تباہ کئے جائیں: حکومت

کوئی طالبان اچھا نہیں، تمام گروپوں کے خلاف کارروائی، ٹھکانے تباہ کئے جائیں: ...
کوئی طالبان اچھا نہیں، تمام گروپوں کے خلاف کارروائی، ٹھکانے تباہ کئے جائیں: حکومت
کیپشن: Taliban

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی حکومت نے اچھے اور برے طالبان کی تفریق کر دی ہے اور پاک فوج کو شمالی وزیرستان میں موجود تمام طالبان گروپوں کے خلاف بلاتفریق آپریشن کرنے کی ہدایت کر دی ہے۔ شمالی وزیرستان میں فوجی آپریشن ”ضرب عضب“ کو شروع ہوئے ایک ہفتے سے زیادہ کا عرصہ گزر چکا ہے اور اب تک 300 سے زائد طالبان کے بارے جانے اور متعدد ٹھکانے تباہ ہونے کی خبریں بھی موصول ہوئی ہیں جبکہ آج تازہ ترین کاررائیوں کے دوران 12 دہشت گردوں نے فورسز کے سامنے ہتھیار بھی ڈال دیئے ہیں تاہم حکومت نے اچھے اور برے طالبان میں تفریق ختم کرتے ہوئے فوج کو بلا تفریق کارروائی کی ہدایت کر دی ہے۔ نجی ٹی وی ڈان نیوز کے مطابق مشیر برائے خارجہ امور سرتاج عزیز نے بھی اس بات کی تصدیق کی ہے اور کہا ہے کہ شمالی وزیرستان میں تمام طالبان گروپوں کے خلاف بلا تفریق کارروائی کرتے ہوئے تمام ٹھکانے تباہ کر دیئے جائیں گے۔ واضح رہے کہ اس سے قبل یہ خبریں سامنے آ رہی تھیں کہ شمالی وزیرستان میں آپریشن مزاحمت کرنے والے طالبان کے خلاف کیا جا رہا ہے جبکہ وہاں ایسے طالبان بھی موجود ہیں جنہیں حکومت اچھا سمجھتی ہے تاہم اب یہ خبریں دم توڑ گئی ہیں اور حکومت نے فوج کو تمام طالبان گروپوں کے خلاف بلاتفریق کارروائی کرنے کی ہدایت کر دی ہے۔