بھارت کا اصلی سنگھم، ایس ایس پی نے 6 سالہ بچی کا ریپ کرنے والے ملزم کو تھانے کے اندرگولیاں ماردیں

بھارت کا اصلی سنگھم، ایس ایس پی نے 6 سالہ بچی کا ریپ کرنے والے ملزم کو تھانے کے ...
بھارت کا اصلی سنگھم، ایس ایس پی نے 6 سالہ بچی کا ریپ کرنے والے ملزم کو تھانے کے اندرگولیاں ماردیں

  


لکھنﺅ (ڈیلی پاکستان آن لائن) انڈین پولیس سروس میں ایس ایس پی کے عہدے پر فائز اجے شرما نے 6 سالہ بچی کا ریپ کرنے والے ملزم کی دونوں ٹانگوں میں گولیاں مار دیں۔ پولیس کا یہ مبینہ مقابلہ ریاست اتر پردیش کے ضلع رام پور کے تھانہ سول لائنز میں ہوا، جنسی زیادتی اور قتل کے ملزم کو گولیاں مارنے کے بعد ایس پی اجے شرما پورے ملک میں ایک ہیرو بن چکے ہیں اور انہیں بھارت کا اصلی سنگھم قرار دیا جارہا ہے۔

ضلع رام پور سے ایک 6 سالہ بچی اغوا کے بعد جنسی زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کردی گئی تھی۔ اتر پردیش پولیس نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ ملزم کو گرفتاراوربچی کی لاش کو برآمد کرلیا گیا ہے۔ پولیس کے مطابق ملزم تھانہ سول لائنز سے فرار ہونے کی کوشش کر رہا تھا کہ اسی دوران ایس پی ڈاکٹر اجے پال شرما نے ملزم پر 3 گولیاں فائر کیں جو اس کی دونوں ٹانگوں میں لگیں۔ ملزم کو زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

ٹوئٹر پر اپنے ایک ویڈیو پیغام میں ایس پی اجے پال شرما نے شہریوں کی جانب سے ان کے پولیس مقابلے کی حمایت کیے جانے پر اظہار تشکر کیا اور کہا کہ انہیں اس واقعے کے بعدملک بھر سے ایک ہزار سے زائدٹیلی فون کالز موصول ہوئی ہیں جن میں لوگوں نے انہیں اپنا بھائی اور بیٹا قرار دیا ہے۔

خیال رہے کہ ڈاکٹر اجے پال شرما پولیس سروس میں آنے سے پہلے بطور ڈینٹسٹ کام کر رہے تھے، انہوں نے 2011 میں مقابلے کا امتحان پاس کیا اور پولیس سروس میں آئے۔ ریاست اتر پردیش میں تعیناتی کے دوران انہوں نے متعدد پولیس مقابلوں میں ملزمان کو ہلاک کیا ہے جس کے باعث انہیں بھارت کا سنگھم اور انکاﺅنٹر سپیشلسٹ قرار دیا جاتا ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /انسانی حقوق /جرم و انصاف