نوشہرہ ،نظام پو ر قمرمیلا  میں اشتہاریوں اور پولیس کے درمیان مقابلہ، دو پولیس کانسٹیبل شہید، ایس ایچ او سمیت پانچ اہلکار شدید زخمی

نوشہرہ ،نظام پو ر قمرمیلا  میں اشتہاریوں اور پولیس کے درمیان مقابلہ، دو ...
 نوشہرہ ،نظام پو ر قمرمیلا  میں اشتہاریوں اور پولیس کے درمیان مقابلہ، دو پولیس کانسٹیبل شہید، ایس ایچ او سمیت پانچ اہلکار شدید زخمی

  


نوشہرہ (صباح نیوز)نوشہرہ کے علاقے  نظام پو ر قمرمیلا  میں اشہاریوں اور پولیس کے درمیان مقابلہ ۔پولیس زرائع کے مطابق اشتہاریوں کی فائرنگ سے دو پولیس کانسٹبل شہید اور ایس ایچ او تھانہ نظام پور سمیت پانچ اہلکار شدید زخمی ہوگئے، تین زخمیوں کو تشویش ناک حالت میں لیڈی ریڈنگ ہسپتال پشاور منتقل کردیاگیاہے۔پولیس زرائع کے مطابق بدنام زمانہ اشتہاری گل مت کی ساتھیوں کے ساتھ موجودگی کی اطلاع پر پولیس نے اشتہاری  کی کمین گاہ پر چھاپہ مارا ، پولیس مقابلے میں سنگین واردات میں ملوث اہم  اشتہاریوں کی ہلاکت کی بھی اطلاعات آرہی ہیں،پولیس کے مطابق فائرنگ کا تبادلہ دونوں اطراف سے جاری ہے۔نوشہرہ  کے تمام تھانوں اور مردان سے بھی پولیس کے تازہ دم دستے جائے وقوع کی جانب روانہ کر دیئے گئے ہیں جبکہ زخمیوں اور شہیدوں کو ڈسٹرکٹ ہیڈکواٹرہسپتال نوشہرہ منتقل کیاجارہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق نوشہرہ کے علاقے نظام پور  قمرمیلا میں بدنام زمانہ اشتہاری گل متی کی ساتھیوں سمیت علاقے میں کوہاٹ اٹک سی پیک زیرتعمیر روڈ اور نظام پور سیمنٹ میں بڑی کاروائی کرنے کی اطلاعات پر نوشہرہ پولیس نے بروقت کاروائی شروع کی۔پولیس زرائع کے مطابق مسلح خطرناک گل متی کی خفیہ کمین گاہ پر چھاپہ کے دوران مسلح اشتھاریوں نے پولیس موبائل اور پولیس اہلکاروں پر اندھا دھندفائرنگ شروع کردی۔گاوں کے عینی شایدین کے مطابق مسلح خطرناک اشتہاریوں نے جدید  ہتھیارو ں اور ہینڈ گرینڈ سے پولیس پارٹی پر حملہ کیا جس کے بعد پولیس نے بھرپور جوابی کاروائی کی۔پولیس زرائع کے مطابق چھ گھنٹوں سے زائدوقت سے پولیس اور اشتھاریوں کے درمیان مقابلہ جاری ہے۔

پولیس زرائع کے مطابق خطرناک اشتھاریوں کی فائرنگ سے دو پولیس اہلکار ڈی ایس پی آکوڑہ خٹک کے گن مین کانسٹبل اسد خان اور کانسٹیبل اسفیند یار خان موقعہ پر شہید ہوگئے جبکہ ایس ایچ او تھانہ نظام پور انسپکٹر مسعود خان سمیت پانچ اہلکار زخمی ہوگئے۔شہید اور زخمیوں کو ریسکیو 1122نے ڈسٹرکٹ ہیڈکواٹر ہسپتال نوشہرہ منتقل کیا۔پولیس زرائع کے مطابق تین شدید زخمی پولیس اہلکاروں کو تشویش ناک حالت میں لیڈی ریڈنگ ہسپتال پشاور منتقل کردیاگیاہے۔ڈسٹرکٹ ہیڈکواٹر ہسپتال نوشہرہ کے زرائع کے مطابق دو شہید اہلکاروں کانسٹبل اسفیند یار خان اور کانسٹبل اسد خان سمیت زخمی ایس ایچ او تھانہ نظام پور انسپکٹر مسعود خان،کانسٹبل زین اللہ،کانسٹبل رویدار ،کانسٹبل عاطف کو لایاگیاہے۔ شدید زخمیوں کو تشویش ناک حالت میں لیڈی ریڈنگ ہسپتال پشاور منتقل کردیاگیا۔دشوار گزار پہاڑیوں کی وجہ سے پولیس مقابلے میں دشواری کا سامنا ہیں۔ڈسٹرکٹ ہیڈکواٹرہسپتال نوشہرہ میں ایک ڈاکٹر ہونے کی وجہ سے مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا ۔ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر نوشہرہ کپٹن ر منصور آمان اشتھاریوں کے خلاف اپریشن کی نگرانی کررہے ہیں۔آخری اطلاعات آنے تک پولیس مقابلہ جاری ہے۔ پولیس زرائع کے مطابق تین ستمبر 2018  کو اسی بدناک زمانہ اشتھاری کے ساتھ پولیس مقابلہ میں ایک ہیڈکانسٹبل نذیر حسین شہید اور دو اہلکار زخمی ہوچکے ہیں۔

مزید : علاقائی /خیبرپختون خواہ /نوشہرہ