بڑی بڑی مویشی منڈیوں پر پابندی لگادی گئی

بڑی بڑی مویشی منڈیوں پر پابندی لگادی گئی
 بڑی بڑی مویشی منڈیوں پر پابندی لگادی گئی

  

جی دوستوں تازہ تازہ خبر ہے کہ پنجاب کے بڑے شہروں میں مویشی منڈیوں پہ بھی پابندی لگا دی گئی جی ہاں خبر کے مطابق منڈیاں شہروں سے باہر کم آبادی والے علاقوں میں لگانے کی تجویز ہے جی دوستوں سنا ہے کہ کرونا کی وجہ سے عید قربانی میں بھی عوام کو مسائل درپیش ہو سکتے ہیں جی ہاں عوام تو پہلے ہی پریشان ہے اور اب یہ خبر کہ مویشی منڈیاں شہروں سے باہر دور دراز علاقوں میں لگائی جائینگی عوام کو غمگین کر گئی جی ہاں دوستوں بہت سے عوام کہہ رہی ہے کہ اگر شہر وں سے باہر دور مویشی منڈیاں لگائی گئیں تو عام آدمی کے لئے مزید مشکلات پیدا ہو نگی جی ہاں پہلے تو شہر سے دور جاؤ جانور خریدو اور پھر واپسی پہ بکرا گھر لانے کے لئے سواری بھی کرائے پر علیحدہ سے منہ مانگے داموں حاصل کرو۔

جی ہاں اس سے بڑا ظلم کیا ہو گا کہ ہم ہر تہوار کو لوٹنے کا ذریعہ بنا لیتے ہیں جی ہاں ہمارے ہاں جب بھی کوئی تہوار عید شب برآت 14 اگست آتی ہے تو ازخود مہنگائی میں اضافہ ہو جاتا ہے جی ہاں دنیا بھر میں جب بھی کسی قسم کا تہوار آتا ہے تو دنیا بھر میں اشیاء سستی کر کے بیچی جاتی ہیں لیکن ہم لوگ تو آگ لگا دیتے ہیں آگ اور منہ مانگی قیمت پہ اشیاء فروخت کرتے ہیں اور بے چاری عوام خریدنے پر مجبور ہے اور عید قربان پہ بھی یہ سلسلہ جاری رہتا ہے مہنگے سے مہنگا جانور فروخت کرنے کے لئے لایا جاتا ہے جی ہاں افسوس ناک بات ہے کہ ہم نے مقدس تہوار کو بھی کاروبار میں بدل دیا ہے جبکہ حکومت اس سارے سلسلے میں خاموشی اختیار کئے رکھتی ہے مطلب چپ سادھ لیتی ہے جی ہاں حکومت چاہے کوئی بھی ہو بیوپاریوں نے اپنی ہی مرضی کرنی ہوتی ہے بہر حال عوام کہہ رہی ہے کہ اگر مویشی منڈیاں شہر سے باہر لگائی جا سکتی ہیں تو پھر دکانداروں کو سستے جانور بیچنے پہ بھی مجبورکیا جا سکتا ہے تو بہر حال اجازت چاہتے ہیں فی الوقت تو چلتے چلتے اللہ نگہبان رب راکھا

مزید :

رائے -کالم -