بزرگ شہری کے قتل کا معمہ حل،بیٹے او بہو نے مل کر موت کے گھاٹ اتارا

بزرگ شہری کے قتل کا معمہ حل،بیٹے او بہو نے مل کر موت کے گھاٹ اتارا

  

لاہور(کرائم رپورٹر)انویسٹی گیشن پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے 72سالہ بزرگ شہری کو قتل کرنے والے اس کے سگے بیٹے، بہو اور ان کے ساتھی سمیت 3ملزمان کو گرفتار کر کے آلہ قتل ڈنڈا، خون آلود کپڑے اور موٹر سائیکل برآمد کر لی ہے۔ تفصیلات کے مطابق ایس ایس پی انویسٹی گیشن لاہور ذیشان اصغر کی سربراہی میں پولیس ٹیم نے ملزمان کو جدید ٹیکنالوجی کی مدد سے کارروائی کرتے ہوئے 72سالہ بزرگ شہری نذیر احمدکے اندھے قتل کی واردات میں ملوث اس کے سگے بیٹے ارشد، بہوکرن اور ان کے ساتھی خرم شہزاد عرف عباس کو گرفتار کر لیا ہے۔مقتول کے بیٹے ارشد نے اپنی بیوی کے ساتھ مل کر معمولی گھریلو ناچاقی کی رنجش پر سگے باپ نذیر احمد کوقتل کر دیا تھا۔ملزمان نے مقتول کی نعش بوری میں بند کر کے2روز تک گھر کی چھت پر رکھے رکھا۔ اس دوران ملزمان نے قتل کی واردات کو اغواء کا رنگ دینے کے لیے تھانہ شفیق آباد میں مقتول نذیر احمد کے اغواء کا مقدمہ درج کروادیا تھا تا کہ کوئی ان پر شک نہ کرے۔ لاش کو ٹھکانے لگانے کے لیے ملزمان نے اپنے ساتھی ملزم خرم شہزاد عرف عباس کی مدد حاصل کی اور بوری بند لاش کو موٹر سائیکل پر لاد کر گھر کے قریب خالی پلاٹ میں پھینک کر خودخاموشی سے فرار ہو گئے تھے۔ملزمان کی نشاندہی پر آلہ قتل ڈنڈا، خون آلود کپڑے اور موٹر سائیکل برآمد کر لی گئی ہے۔سی سی پی او لاہور ذوالفقار حمید نے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کر کے اندھے قتل کی سنگین واردات میں ملوث ملزمان کی گرفتاری پر پولیس ٹیم کے لیے تعریفی اسناد کا اعلان کیا ہے۔

مزید :

علاقائی -