احساس پروگرام کی معاونت کیلئے حل متعارف کرادیا،بینک الفلاح

احساس پروگرام کی معاونت کیلئے حل متعارف کرادیا،بینک الفلاح

  

کراچی(پ ر)حکومت پاکستان کی طرف سے ملک بھر میں احساس ایمرجنسی کیش تقسیم پروگرام 2020 کے تحت متاثرین کو امداد فراہم کی جا رہی ہے، اس سلسلے میں بینک الفلاح نے ان متاثرین کے لئے جدت انگیز سہولت متعارف کرائی ہے جن کی بایومیٹرک ویری فیکیشن کی تصدیق مختلف وجوہات کی بناء پر ممکن نہیں ہے۔ اس جدت انگیز سہولت کے نتیجے میں ایسے افراد کو اپنے اکاؤنٹ سے کیش نکلوانے میں یقینی تعاون حاصل ہوگا۔ ان متاثرین میں گلگت۔ بلتستان، خیبرپختونخوا اور آزاد جموں و کشمیر کے ساتھ ہی ساتھ ان علاقوں سے نقل مکانی کرنے والے افراد بھی شامل ہیں جنہیں بایومیٹرک کی تصدیق کے مسائل کا سامنا تھا اور اب وہ بینک الفلاح کی کسی بھی متعین برانچز میں اپنے کمپیوٹرائزڈ شناختی کارڈ اور فون کے ساتھ باسہولت انداز سے آسکتے ہیں۔ بینک میں کمپیوٹرائزڈ شناختی کارڈ نمبر کی نادرا کے ویرسز سسٹم سے تصدیق ہوتی ہے اور دو حصوں پر مشتمل ون ٹائم پاس ورڈ (او ٹی پی) بھیجا جاتا ہے۔ اس کوڈ کے اندراج اور ویرسز کے ڈیٹا بیس کی رپورٹ کی بنیاد پر احساس پروگرام سے مستفید شخص کے طور پر اسکی شناخت کی تصدیق ہوتی ہے اور اسکے نتیجے میں وہ بذات خود برانچ سے اپنے اکاؤنٹ سے فوری رقم نکلوا سکتے ہیں۔ ڈیجیٹل بینکنگ کے گروپ ہیڈ یحیٰ خان نے کہا، "ہم سمجھتے ہیں کہ دور دراز علاقوں میں آبادی کافی متنوع ہے اور ہم اس بات کے معترف ہیں کہ ہمارے تمام مستفید افراد کو ٹیکنالوجی سے فائدہ اٹھانے کی ضرورت ہے۔ اس سہولت کے ساتھ معمر مستفید افراد یا جسمانی معذور افراد بھی اس حکومتی اسکیم سے فائدہ اٹھانے کا سلسلہ جاری رکھ سکتے ہیں۔ بینک الفلاح کو اس مشکل وقت میں اپنے شہریوں کی پریشانی کا احساس ہے اور انہیں جدت انگیز بنیادی سہولت فراہم کرنے پر فخر ہے۔ "احساس ایمرجنسی کیش تقسیم پروگرام ملکی تاریخ میں سماجی فلاح و بہبود کا سب سے بڑا فنڈ ہے جس کا تخمینہ 144 ارب روپے سے زائد لگایا جاتا ہے۔

بینک الفلاح اس پروگرام کا خصوصی پارٹنر ہے جو ملک کے دور دراز شمالی علاقوں میں لوگوں کو خدمات پیش کررہا ہے اور اب تک 28.3 ارب روپے سے زائد رقم تقسیم کرچکا ہے۔

مزید :

کامرس -