صوبے اوروسیب کے حقوق کیلئے سڑکوں پرآنا ہوگا، ظہور دھریجہ

  صوبے اوروسیب کے حقوق کیلئے سڑکوں پرآنا ہوگا، ظہور دھریجہ

  

ملتان(سٹی رپورٹر)صوبے اور سول سیکرٹریٹ کے نام پر لولی پاپ دیئے جا رہے ہیں، حکمران وسیب دشمنی سے باز نہیں آئیں گے، صوبے اور وسیب کے حقوق کیلئے سڑکوں پر آنا ہوگا۔ ان خیالات کا اظہار سرائیکستان صوبہ محاذ کی طرف سے سرائیکی رہنما پروفیسر شوکت مغل، عاطف خان مزار یاور سلیم شہزاد مرحوم آف دیرہ اسماعیل خان کی یاد میں منعقد کئے گئے تعزیتی ریفرنس میں سرائیکی رہنماو?ں نے کیا۔ اس موقع پر سرائیکی شعراء اجمل خاموش، ظفر مسکین، اکرم میانوالہ، (بقیہ نمبر5صفحہ6پر)

ریاض ملتانی، لیاقت قریشی، صاحبزادہ سید احسان شاہ کلیمی، حافظ محمد صدر رضا سعیدی نے منظوم نذرانہ عقیدت پیش کیا جبکہ سرائیکی سنگر ثوبیہ ملک، مقبول کھرل اور اکرم فریدی نے اپنی آواز کا جادو جگایا۔ ظہور دھریجہ نے کہا کہ ہم بچھڑنے والوں کی یاد بھی منائیں اور جدائی کے غم کو طاقت میں تبدیل کریں اور جابر و ظالم حکمرانوں کے ساتھ ٹکرا جائیں اور اس وقت تک خاموش نہ رہیں جب تک وسیب کی شناخت کے مطابق صوبہ سرائیکستان حاصل نہ کر لیں۔ سرائیکستان ڈیموکریٹک پارٹی کے چیئرمین رانا محمد فراز نون نے کہا کہ ہم صوبہ سرائیکستان کے قیام کیلئے لانگ مارچ کریں گے اور قومی اسمبلی کے سامنے دھرنا دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ آج میں وسیب کے لوگوں کو کہتا ہوں کہ فوٹو سیشن کا دور ختم ہو چکا، اب ہمیں سنجیدگی کے ساتھ آگے کی طرف چلنا ہوگا اور تمام جماعتوں کو ایک پلیٹ فارم پر متحد کرنا ہوگا۔ سرائیکستان نوجوان تحریک کے مہر مظہر کات نے کہا کہ نوجوانوں میں بے چینی اور بے قراری ہے، ہمارا سی ایس ایس کا کوٹہ الگ کیا جائے اور عدلیہ، انتظامیہ کے ساتھ ساتھ فوج میں وسیب کے نوجوانوں کو ملازمتیں دی جائیں، جب تک حقوق نہیں ملیں گے خاموش نہیں رہیں گے۔

ظہور دھریجہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -