"صدر عارف علوی منصب کا ناجائز فائدہ اٹھا رہے ہیںِ " شیری رحمان برس پڑیں

"صدر عارف علوی منصب کا ناجائز فائدہ اٹھا رہے ہیںِ " شیری رحمان برس پڑیں

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )پاکستان پیپلز پارٹی کی سینیٹر شیری رحمان کا کہنا ہے کہ ڈاکٹر عارف علوی کا بطور صدر ایک کے بعد دوسرا ترمیمی بل دستخط کے بغیر اعتراضات کے ساتھ واپس کرنا افسوسناک ہے ۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر پیغام جاری کرتے ہوئے شیری رحمان کا کہنا تھا کہ بحیثیت رکن پارلیمنٹ مجھے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کی غیر جانبداری پر گہری تشویش ہے ، پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی )کے سیاسی مقاصد کے لیے صدر عارف علوی اپنے آئینی منصب کا غیر ضروری فائدہ اٹھا رہے ہیں ۔

پاکستان پیپلز پارٹی کی اہم رکن کا ایک اور ٹویٹ میں کہنا تھا کہ عمران خان کے دور حکومت میں ایوان صدر کو آرڈیننس فیکٹری بنایا گیا تھا ، اب صدر علوی پارلیمنٹ سے منظو شدہ قانون پر بھی ذاتی اعتراضات لگا کر واپس بھج دیتے ہیں ،وہ ملک کے نہیں عمران خان کے صدر بنے ہوئے ہیں ، عمران خان کی خوشنودی کیلئے وہ پارلیمنٹ سے منظور شدہ بلز واپس کر دیتے ہیں ۔

شیری رہنما کا مزید کہنا تھا کہ ترمیمی بلز پر دستخط کے وقت صدر علوی کہتے ہیں وہ اللہ تعالیٰ کے سامنے جوابدہ ہیں ، عمران خان کے کہنے پر غیر جمہوری طور پر صدارتی آرڈیننس جاری کرنے اور اسمبلی تحلیل کرتے وقت کیا صدر علوی اللہ تعالیٰ کو جوابدہ نہیں تھے؟ صدر علوی کو آئینی اور پارلیمانی معاملات میں رکاوٹ نہیں بننا چاہیے ۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -