نواز شریف کیخلاف اور ہمارے حق میں کبھی فیصلہ نہیں آیا : زرداری

نواز شریف کیخلاف اور ہمارے حق میں کبھی فیصلہ نہیں آیا : زرداری
 نواز شریف کیخلاف اور ہمارے حق میں کبھی فیصلہ نہیں آیا : زرداری

  


ملتان(سٹی رپورٹر+جنرل رپورٹر) ملتان(آن لائن)سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ سیاسی جج خود صدر بننا چاہتا تھا سابق چیف جسٹس کے سیاست میں آنے کی بات درست ثابت ہوئی ، بی بی نے کہا تھا میاں صاحب کے خلاف اور ہمارے حق میں کبھی فیصلہ نہیں آیا، حامد سعید کاظمی کو باعزت بری ہونے پر مبارک باد دیتا ہوں، ہمیں یہ ضرور پتہ ہے کہ نواز شریف کے خلاف کبھی فیصلہ نہیں آیا ایک سابق چیف جسٹس بارے کہا تھا وہ سیاست میں آنا چاہتے ہیں اور انہوں نے اپنی سیاسی پارٹی بنا کر میری بات درست ثابت کر دی، کل جسے عوام نے کہا تھا اپنی اوقات میں رہو اس چیف جسٹس سے کہوں گا کہ شرم کرو۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سابق وفاقی وزیر حامد سعید کاظمی کی رہائشگا ہ پر حج کرپشن کیس میں رہائی ملنے پر مبارکباد دینے کے بعدمیڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر سابق صدر آصف علی زرداری نے مزید کہا کہ اللہ تعالی نے سیدحامد کاظمی کے ساتھ انصاف کیا ہے، سیدحامد سعید کاظمی کے باعزت بری ہونے پر الزام لگانے والے کہاں ہیں ۔سابق صدر اسلامی جمہوریہ پاکستان اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹرین کے صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ انتخابات وقت پر ہوں یا وقت سے پہلے پیپلزپارٹی ہر وقت تیار ہے تاہم مسلم لیگ (ن) سینٹ کے انتخابات سے پہلے الیکشن کی طرف نہیں جائے گی پانامہ لیکس کے فیصلے کے حوالے سے قبل از وقت کچھ نہیں کہا جاسکتا حقیقت یہی ہے کہ نواز شریف کے خلاف کبھی کوئی فیصلہ نہیں آتا بی بی کہتی تھی کہ نواز شریف میں پتہ نہیں کیا چمک ہے وہ کبھی پھنستے نہیں ہیں اور ہم کبھی بچتے نہیں ہیں آئندہ انتخابات میں پیپلز پارٹی ملک بھر سمیت پنجاب بھر میں اکثریت حاصل کرے گیانہوں نے کہاہے کہ افتخار چوہدری شرم کرو تم ایک سیاسی جج تھے تم نے پیپلز پارٹی پر الزامات کی بوچھاڑ کردی تھی‘اور ہمیں کہتے تھے کہ ’’حاجیوں‘‘ کو بھی نہ چھوڑا‘ لیکن تمھارے تمام الزامات خود الیکشن لڑنے اور صدر بننے کے لئے تھے ان کی حمایت کرنے والے دوستوں سے کہا تھا کہ ان کے پیچھے نہ لگو ‘مگر اس وقت کوئی نہ مانا ‘آج سب نے دیکھ لیا کہ انہوں نے اپنی سیاسی پارٹی بنائی اور الیکشن لڑنے کا بھی اعلان کیا ہے آصف زرداری نے کہاہے کہ انہیں غیب کی باتوں کی علم نہیں، اس لئے وہ نہیں جانتے کہ پاناما پر ججوں کے دلوں میں کیا ہے، یہ ضرور پتا ہے کہ ہمارے حق میں اور میاں صاحب کے خلاف کبھی کوئی فیصلہ نہیں آیا،‘انہوں نے کہاہے کہ بینظیر قتل کیس میں جتنے سیاسی ایکٹرز تھے انہیں اللہ تعالی نے سزا دیدی ہے آج پیپلز پارٹی پاکستان کی مقبول ترین پارٹی بن چکی ہے ‘ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت سکیورٹی فراہم کرے یا نہ کرے پیپلز پارٹی پنجاب میں جلسے ضرور کرے گی انہوں نے کہاہے کہ آج کل’’جتنا لچا اتنا اچا‘‘ والا دور چل رہا ہے‘ بلاول سیاسی فیصلے کرنے میں آزاد ہیں ‘ملتان میں بھی بلاول ہاؤس بنا ئیں گے اور ن لیگ سے پورا پنجاب لیں گے کیونکہ پورا پنجاب ہمارا ہے اور یہاں کے عوام بھی پیپلز پارٹی کا ساتھ دیں گے ۔

مزید : صفحہ اول


loading...