مریم نواز کو نیب نے لیکچر کے لئے نہیں بلایا کہ وہ ۔۔۔بیرسٹر شہزاد اکبر نے ایسی بات کہہ دی کہ صورت حال مزید کشیدہ ہو جائے

مریم نواز کو نیب نے لیکچر کے لئے نہیں بلایا کہ وہ ۔۔۔بیرسٹر شہزاد اکبر نے ...
مریم نواز کو نیب نے لیکچر کے لئے نہیں بلایا کہ وہ ۔۔۔بیرسٹر شہزاد اکبر نے ایسی بات کہہ دی کہ صورت حال مزید کشیدہ ہو جائے

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)مشیر داخلہ و احتساب بیرسٹر شہزاد اکبر مرزا نے کہا ہے کہ اداروں پر حملہ کرنا شریف خاندان کا وطیرہ رہاہے،ان لوگوں نے سپریم کورٹ پر بھی حملہ کیا او رقومی سلامتی کے اداروں پر بھی او ریہ رویہ مافیا کا ہوتاہے،مریم نواز کو نیب نے لیکچر کے لئے نہیں بلایا کہ وہ جتھہ لیکر پیش ہوں بلکہ منی لانڈرنگ کے حوالے سے ان سے پوچھ گچھ ہونی ہے،حکومتی اقدامات کےاثرات آنےوالے دنوں میں دیکھیں گے،

وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بیرسٹر شہزاد اکبر نے کہاکہ مریم نواز اوران کے ہمنوا نیب کودھمکیاں دے رہے ہیں،یہ اتنےلاڈلےکیوں ہیں کہ انہیں بلانےکی جرات نہیں کی جاسکتی؟ مریم نوازپہلے بھی  600لوگ لیکر پیشی پر گئی تھیں،اداروں پر حملہ آور ہونا ان کی تاریخ ہے ،مریم نوازکی پیشی کےموقع پرامن امان کےپیش نظررینجرزاورپولیس تعینات ہوگی،منی لانڈرنگ میں سلمان شہباز کا نام سرفہرست ہے،حمزہ شہباز بھی شوگر مل کے ڈائریکٹر ہیں اور ان کا نام بھی اس کیس میں ہے،چینی کی قیمتیں بڑھانے میں بڑے بڑے مل مالکان شامل ہیں اور اس کیس میں کھربوں روپے کی ٹرانزیکشنز ہوئی ہیں جس کے ثبوت موجود ہیں۔

انہوں نے کہا کہ شوگر مافیا کے لئے مافیا کا لفظ بہت چھوٹا ہے،ان لوگوں نے منی لانڈرنگ بھی کی ہے اور بے نامی اکاؤنٹس بھی بنائے ہیں، اس گروہ کے خلاف 10ایف آئی آر ہوچکی ہیں ،شوگر انڈسٹری سے متعلقہ امور کو ریگولیٹ کرنے کے لئے وفاقی او رپنجاب حکومت ایک پیج پر ہیں،اس ضمن میں ٹریک اینڈ ٹریس سسٹم بھی نافذ کیا جائے گا،پہلے تو واٹس ایپ پر اربوں کھربوں کی ڈیل کی جاتی تھی او رچینی کی قیمت میں خود ساختہ اضافہ کیا جاتا تھا لیکن ہمارے اقدامات سےیہ پورا نظام ریگولیٹ ہوگااو رچینی کی قیمت کو بڑھنے سےروکاجاسکے گا،شوگرکی قیمت کبھی 70روپےتوکبھی100روپےہوجاتی ہے،چارماہ کےاندر پورے سال کی چینی تیار ہوجاتی ہے،

مشیر داخلہ نےکہا کہ سٹے بازوں کے خلاف بڑا آپریشن کیا گیا ہے،چینی کی قیمتوں میں ردوبدل ان سٹے بازوں کی وجہ سے ہوتا ہے،دیکھناہوگاوہ کون سی قوتیں ہیں جوقیمتوں کےاتارچڑھاؤمیں ملوث ہیں؟سٹے بازوں اورذخیرہ اندوزوں کےگروہوں کے ساتھ شوگزملز بھی ملوث تھیں،یہ سٹے بازکہیں رجسٹرڈ ہی نہیں ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ براڈشیٹ کمیشن،رپورٹ وزیراعظم کوجمع کرائی جاچکی ہے،براڈشیٹ کمیشن رپورٹ میں تمام معاملات کی نشاندہی کی گئی ہے،براڈشیٹ کمیشن رپورٹ آیندہ کابینہ اجلاس میں پیش کی جائے گی،رپورٹ پبلک کرنی ہے یا نہیں، فیصلہ کابینہ کرے گی۔

بیرسٹر شہزاد اکبر نے کہا کہ وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی قیادت میں پنجاب حکومت نے اشیائے ضروریہ کی سستے داموں فراہمی اور شوگر مافیا کی سرکوبی کے لئے مثالی اقدامات اٹھائے ہیں جس پر وہ مبارکباد کے مستحق ہیں ،اشیائے ضروریہ سے متعلق آرڈیننس کے نفاذ سے مثبت اثرات مرتب ہوں گے۔

مزید :

قومی -