پاکستان کو ایسے لیڈروں کی ضرورت ہے جو صوفیا کی فکر کے امین ہوں،راغب نعیمی

پاکستان کو ایسے لیڈروں کی ضرورت ہے جو صوفیا کی فکر کے امین ہوں،راغب نعیمی

 لاہور(سٹاف رپورٹر)ناظم اعلیٰ جامعہ نعیمیہ علامہ محمد راغب حسین نعیمی نے کہا کہ موجودہ پاکستان قائد اعظم اور علامہ اقبال کا پاکستان نہیں ہے پاکستان کی بنیاد دو قومی نظریہ ہے اور دوقومی نظریہ کے خلاف سازشیں کرنے والوں نے ابھی تک پاکستان کو دل سے قبول نہیں کیا لیکن اب وقت آگیا ہے کہ پاکستان کو اےسے سیاستدان فراہم کےے جائیں جو صوفیاءکی فکر کے امین ہوں سلامی جمہوریہ پاکستان کو بنانے والے اولیاءکرام ہی تھے جبکہ پاکستان اللہ تعالیٰ کی بہت بڑی نعمت ہے اور اللہ کی نعمت کی ناشکر ی درست عمل نہیں ہے علامہ محمد راغب حسین نعیمی نے کہاکہ اسلام کی روح تصوف کے پرچار سے دنیا کو پرامن معاشرے میں تبدیل کیا جا سکتا ہے اور دنیا کی بدامنی کی سب سے بڑی وجہ روحانیت سے دوری ہے کیونکہ صوفیاءکرام کی روحانی تربیت سے ہی انسان ،انسان بنتا ہے اور یہ صوفیاءکرام کے ماننے والے ہی ہیں جو گناہ گارسے نہیں بلکہ گناہ سے نفرت کرتے ہیں اور یہی عمل نبی کریم ﷺکی ذات میں موجود تھا اللہ اور رسول اللہ ﷺ کی رضا حاصل کرنے والے انسانیت کو تکلیف نہیںپہنچاتے اورجولوگ ملک میں قتل ،ڈاکے اور دیگر جرائم میں ملوث ہیں وہ اللہ کی بارگاہ میں اپنے گناہوں کی معافی مانگیں اور صرا ط مستقیم پر آجائیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1