حجاب نے مسلمان ہونے پر مجبورکردیا: پشپا

حجاب نے مسلمان ہونے پر مجبورکردیا: پشپا

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) ہندومذہب سے مسلمان ہونیوالی لڑکی پشپانے بتایاکہ اسلام قبول کرنے سے قبل اُن پر سسرال میں ظلم ڈھائے جاتے تھے ، غربت کے باعث فیکٹری میں کام شروع کیا تو مسلمان ورکر کی جانب سے پردہ کرنے کی درخواست نے اسلام قبول کرنے پر مجبورکردیا۔ایک انٹرویومیں اُنہوں نے بتایاکہ ساڑھی کی بجائے پورے لباس کی درخواست کی گئی اور اس طرح آہستہ آہستہ میرے دل میں اللہ تعالیٰ نے اسلام سے محبت پیداکردی ۔اُن کاکہناتھاکہ وہ سوچ بھی نہیں سکتی تھیں کہ اسلام میں عورت کی اتنی عزت ہوگی ، میں نے اپنے شوہر کوبھی مسلمان کرلیا۔ یادرہے کہ بعض ممالک میں حجاب پر پابندی عائد کردی گئی ہے لیکن سزاﺅں کے باوجود مسلمان خواتین حجاب پہن رہی ہیں تاہم مشکلات کاشکار ہیں لیکن پاکستان سمیت بعض ممالک میں خواتین کو پردے کی نہ صرف اجازت ہے بلکہ اِسے اچھاتصورکیاجاتاہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...