ضلعی عدالتوں کے احکامات کی تعمیل نہ ہونے کے باعث اندراج مقدمات کی درخواستیں التواءکا شکار

ضلعی عدالتوں کے احکامات کی تعمیل نہ ہونے کے باعث اندراج مقدمات کی درخواستیں ...

لاہور (نامہ نگار)فیڈرل انویسٹی گیشن اتھارٹی (ایف آئی اے )کی جانب سے ضلعی عدالتوں کے احکامات کی تعمیل نہ کئے جانے کے باعث سائبر کرائم ، انسانی سمگلروں کے خلاف اور دیگر ایف آئی اے سے متعلق دائر اندراج مقدمات کی درخواستیں التواءکا شکار ہونے لگی ہیں ،واضح رہے کہ اس ضمن میں کچھ روز قبل ایڈیشنل سیشن جج محمد نعیم نے ڈائریکٹر ایف آئی اے کو لیٹر جاری کیا ہے جس میں انہیں احکامات جاری کئے گئے کہ وہ ایف آئی اے کے حوالے سے آنے والی درخواستوں پر پیروی آفیسرز عدالت میں پیش ہونے کے ساتھ ساتھ عدالتی احکامات کو یقینی بنائیں تاہم اس حوالے سے ایف آئی اے کی جانب سے اس پرعمل درآمد نہ ہونے کی وجہ سے سائلین کو اتنہائی پریشانی کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ،واضح رہے کہ پنجاب بھر سے انسانی سمگلنگ ، جعلی ویزے ،پاسپورٹ ،فراڈ اور سنگین نوعیت کے مقدمات درج کروانے سائلین ایف آئی اے لاہور دفتر میں آتے ہیں تاہم شنوائی نہ ہونے پر سائلین مقدمات کے اندراج کے لئے سیشن عدالت کا رخ کرتے ہیں، مقامی عدالتوں میں روزانہ کی بنیاد پر متعدد افراد ایف آئی اے کی جانب سے دادرسی نہ ہونے پر عدالتوں کا رخ کررہے ہیں لیکن متعلقہ درخواستوں میں ایف آئی اے حکام و دیگر کی جانب سے عدالت میں جواب داخل نہ کروانے ،پیش نہ ہونے کے علاوہ عدالتی احکامات پر عمل درآمد نہ کرنے کے باعث زیر سماعت درخواستیں التواءکا شکار ہورہی ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4