30نومبر،اب ہمارے کارکن مار نہیں کھائیں گے ،عمران خان ہنگامی آرائی نہیں کرنے دینگے،پرویز رشید

30نومبر،اب ہمارے کارکن مار نہیں کھائیں گے ،عمران خان ہنگامی آرائی نہیں کرنے ...

                اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک/آئن لائن ) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ اس مرتبہ ہمارے کارکن بھیڑوں کی طرح مار نہیں کھائیں گے۔حکمران کسی دھوکے میں نہ رہیں اب تحریک انصاف تبدیل ہو چکی ہے۔دھرنے کے شرکاءنے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ انہیں شاہ محمود قریشی اور پرویز خٹک کو اشتہاری بنا دیا گیا ہے ،حکمران جیلوں میں ڈالیں یا کچھ بھی کریں ہم ان کا مقابلہ کریں گے۔دھرنا دیے ہوئے 104 دن گزرچکے ہیں اور ان کا احتجاج مکمل طور پر پرامن رہا ہے۔30 نومبر کے جلسے میں اگر امن خراب ہوا تواس کی ذمہ داری چودھری نثار اور میاں نواز شریف پر ہو گی۔ اگر ان کی جگہ وہ وزیر اعظم ہوتے تو احتجاج کرنے والوں کا خیر مقدم کرتے اور خود جا کر ان تک پانی اور اشیاءضرورت پہنچاتے۔ہم گرمی میں آئے تھے اور اب سردی آ گئی ہے۔انہوں نے میاں نواز شریف کو چیلنج کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ ن نے الیکشن میں ڈیڑھ کروڑ ووٹ لیے ہیں لیکن وہ ایک بھی جلسہ تحریک انصاف کی طرح کا نہیں کر سکتے۔اگر ان کی حکومت دھاندلی سے نہیں بنی تو وہ ایک جلسہ کر کے دکھائیں۔انہوں نے میاں نواز شریف پر الزام لگایا کہ وہ ہمیں اشتہاری قرار دے رہے ہیں لیکن خود انہوں نے اپنے غنڈوں کے ذریعے سپریم کورٹ پر حملہ کروایا تھا۔جہانگیر ترین کے حوالے سے عمران خان کا کہنا تھا کہ جہانگیر ترین صاف اور شفاف آدمی ہیں اور وہ سب سے زیادہ اور بر وقت ٹیکس ادا کرتے ہیں۔عمران خان نے کہا کہ پی ٹی آئی کے ٹائیگرز پولیس اور مسلم لیگ (ن) کا مقابلہ کریں گے ۔ مسلم لیگ ن کی حکومت نے شاہ محمودقریشی اور پرویز خٹککو اشتہاری قراد دے دیا ہے ۔ایک طر ف پی ٹی آئی کے ساتھ مذاکرات کے لئے کہاجاتا ہے اور دوسری طرف اسلام آباد کو کنیٹنر لگاکر بند کیا جارہاہے ۔ حکومت کی دوغلی پالیسی میں پی ٹی آئی نہیں آئے گی۔ 30 نومبر کو پی ٹی آئی کے لاکھوں لوگ آزادی مارچ دھرنے میں آئیں گے ۔ انہوں نے کہا 30 نومبر کو پی ٹی آئی تاریخی جلسہ کرے گی حکومت جو کچھ بھی کرلے ہر صورت میں حکومت کا مقابلہ کریں گے ، شیلنگ ہو ، آنسو گیس یا کوئی اور ہر حربہ استعمال کیا گیا تو پی ٹی آئی کے ورکرز ہر صورت میں مقابلہ کریں گے ۔پولیس کو آئین و قانون کے مطابق کام کرنا چاہیے نہ کہ مسلم لیگ ن کی قیادت کے غلط فیصلوں کو مانیں ۔ گرمیوں میں آئے تھے اب سردیا ں شروع ہو گئی ہیں ۔ 30 نومبر کو جو بھی ہوجائے ظالم کا ڈٹ کر مقابلہ کریں گے ۔پی ٹی آئی نے ملک کو نہیں لوٹا جس طرح آصف علی زرداری اور شریف برادران نے ملک کا خزانہ لوٹ کر بیرون ممالک میں پیسے بھیجے ۔

مزید : صفحہ اول