انتظامیہ کی مجرمانہ غفلت، ایمونیا گیس لیک ہونے کے واقعات نہ رک سکے

انتظامیہ کی مجرمانہ غفلت، ایمونیا گیس لیک ہونے کے واقعات نہ رک سکے

لاہور(اپنے نامہ نگار سے)گیسز قدرت کا عطیہ ہیں مگر ان کے استعمال کیلئے انتہائی احتیاط کی ضرورت ہوتی ہے۔ بصورت دیگر سنگین مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ بادامی باغ میں رونما ہونے والا واقعہ کوئی پہلا واقعہ نہیں صوبائی دارالحکومت میں اس سے قبل بھی ایمونیاگیس لیک ہو نے کے واقعات پیش آچکے ہیں، جس میں12سے زائد افراد ہلاک ہو ئے تھے جبکہ درجنوں مویشی بھی اسی وجہ سے موت کے منہ میں چلے گئے تھے۔لیکن انتظامہ کی غفلت کی وجہ سے اس قسم کے واقعات معمول بنتے جارہے ہیں ۔تفصیلا ت کے مطابق تقریبا17سال قبل گڑھی شاہو میں ایمونیا گیس کا ٹینکر لیک ہو نے سے 12افراد ہلاک ہو ئے تھے جبکہ درجنوں مویشی بھی جان سے گئے تھے ۔گزشتہ سال گرین ٹاؤن کے علاقے باگڑیاں نواز موڑ میں برف خانے کی زہریلی گیس لیک ہونے سے 10 افراد بے ہوش ،9 بھینسیں ہلاک ہوئیں تھیں جبکہ اہل علاقہ جان بچانے کے لیے گھروں سے بھاگ نکلے تھے ۔ایمونیا گیس مشینری پرانی ہوجانے کی وجہ سے لیک ہو تی ہے سٹوریج مالکان رقم بچانے کی خاطر سالہاسال سے پرانی مشینری ہی استعمال کر رہے ہیں جس کی وجہ سے اس قسم کے واقعات رونما ہو تے ہیں۔

مزید : علاقائی