نیلم جہلم ہائیڈرو پاور پراجیکٹ،جڑواں اور سنگل سرنگوں کی کھدائی مکمل

نیلم جہلم ہائیڈرو پاور پراجیکٹ،جڑواں اور سنگل سرنگوں کی کھدائی مکمل

لاہور ( کامرس رپورٹر)نیلم جہلم ہائیڈرو پاور کمپنی کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کا 29 واں اجلاس گزشتہ روز منعقد ہوا ۔ اجلاس کے دوران منصوبے پر مجموعی پیش رفت کا جائزہ لیا گیا ۔ پراجیکٹ کے اہم حصوں کی تکمیل کے لئے معینہ مدت کے امور بھی زیر بحث لائے گئے جبکہ دریائے جہلم کے نیچے سے گزرنے والی جڑواں ہیڈ ریس ٹنلزپر پیش رفت کا جائزہ بھی لیا گیا ۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ جڑواں سرنگوں میں سے ہر ایک 37 مربع میٹر ہائیڈرالک رقبہ پر مشتمل ہے اور دریائے جہلم کے نیچے 200 میٹر کی گہرائی میں اِن دونوں جڑواں سرنگوں کی کھدائی کامیابی کے ساتھ مکمل کی جاچکی ہے اور اس حوالے سے اکتوبر 2014 ء کے دوران پانی کے رساؤ سمیت تمام تکنیکی اور ارضیاتی مشکلات پر قابو پایا جاچکا ہے ۔ مذکورہ سرنگیں تکمیل کے قریب ہیں اور انہیں جلد ہی مرکزی سرنگوں کے نظام سے منسلک کر دیا جائے گا ۔ بائیں ہیڈ ریس ٹنل متوقع طور پر 15 جنوی 2016 ء جبکہ دائیں ہیڈ ریس ٹنل 15 فروری 2016 ء کو مکمل ہونے پر مرکزی سرنگوں سے منسلک کر دی جائے گی ۔اجلاس نے نیلم جہلم ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کے 59 کلو میٹر طویل مجموعی سرنگوں پر تعمیراتی کام کا بھی جائزہ لیا ۔ پراجیکٹ ایریا میں مختلف مقامات پر اِن جڑواں اور سنگل سرنگوں کی کھدائی کا کام مختلف تکنیک کے ساتھ جاری ہے اور انہیں کامیابی کے ساتھ باہم منسلک کیا جارہا ہے ۔ اجلاس میں سی 2 اور سی 3 کی دو ٹنلز کو درستگی کے ساتھ باہم منسلک کرنے کی تعریف کرتے ہوئے اِس خواہش کا اظہار کیا گیا کہ دریائے جہلم کے نیچے سے گزرنے والی سرنگوں کو بھی اسی پیشہ ورانہ مہارت کے ساتھ مرکزی سرنگوں سے منسلک کر دیا جائے گا ۔اجلاس میں طے پایا کہ اِس موقع پر ایک پر وقار تقریب کا اہتمام کیا جائے گا جبکہ بورڈ کے تمام ممبرز نے اِس امر کا مشاہدہ کیا کہ پراجیکٹ کی مقررہ وقت میں تکمیل کے لئے ضروری ہے کہ پراجیکٹ کا فنانشل کلوزر جلد از جلد حاصل کیا جائے ۔

مزید : صفحہ آخر