مطالبات کی منظوری کے باوجود عملدرآمد نہ ہونے پر ایپکا دوبارہ سراپا احتجاج

مطالبات کی منظوری کے باوجود عملدرآمد نہ ہونے پر ایپکا دوبارہ سراپا احتجاج

  

لاہور ( پ ر) حکومت پنجاب کی جانب سے مطالبات کی منظوری کے باوجود ان پر عملدرآمد نہ ہونے پر ایپکا نے دوبارہ سراپا احتجاج بن گئی ہے، اس حوالے سے سرکاری ملازمین کی تنظیم آل پاکستان کلرکس ایسوسی ایشن (ایپکا) کا مرکزی و ہنگامی اجلاس چلڈرن کمپلیکس لائبریری، شاہراہ ایوان تجارت لاہور میں زیر صدارت صدر ایپکا پنجاب حاجی محمد ارشاد منعقد ہو رہا ہے،جس میں ایپکاسنٹرل باڈی ، جنرل کونسل پنجاب کے تمام عہدیداران ،تمام ڈویژنل و ضلعی صدوروجنرل سیکرٹری صاحبان، جبکہ ضلع لاہور کے تمام محکمہ جات کے عہدیداران نے بھرپور شرکت کریں گے۔ مہمان خصوصی مرکزی صدر ایپکا پاکستان محمد اسلم خان ہوں گے۔ اجلاس میں حکومت کے اس رویہ کوزیر بحث لاتے ہوئے منظور شدہ مطالبات کے باقاعدہ نوٹیفکیشن جاری کروانے کے لیے آئندہ کا لائحہ عمل تشکیل دیا جائے گا اورحکومت سے مطالبہ کیاجائیگا کہ وہ وزیر اعلی پنجاب کے ڈائریکٹو مورخہ23-09-2015 کے حوالے سے مطالبات کی منظوری کا نوٹیفکیشن جاری کیا جائے۔

واضح رہے کہ ایپکا کے قائدین کا گزشتہ روز بھی اجلاس منعقد ہوا جس میں مطالبات عملدرآمد نہ ہونے پر سخت تشویش کا اظہار کیا گیا۔ صدر ایپکا پنجاب حاجی محمد ارشاد اورلالہ محمد اسلم نے کہا ہے کہ حکومت بار بار وعدوں کے باوجود سرکاری ملازمین کے مطالبات پر عملدرآمد کروانے میں ناکام رہی ہے۔ اب کسی قسم کے کوئی مذاکرات نہیں ہونگے، انہوں نے بتایا کہ آج کے اجلاس میں احتجاج اورریلیوں کے حوالے سے لائحہ عمل طے کیا جائے گا اور احتجاجی تحریک کا دائرہ کار وسیع کیا جائے گا، جب تک مطالبات مکمل طور پر تسلیم نہیں ہوتے تب تک احتجاج کا سلسلہ جاری رکھا جائے گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -