سی پیک سے ملکی انفراسٹرکچر‘ توانائی نظام میں بہتری آئی‘احمدجواد

سی پیک سے ملکی انفراسٹرکچر‘ توانائی نظام میں بہتری آئی‘احمدجواد

  



لاہور(اے پی پی) بزنس مین پینل و فاق ایوان ہائے صنعت و تجارت پاکستان (ایف پی سی سی آئی) کے سیکرٹری جنرل (فیڈرل) احمد جواد نے کہا ہے کہ سی پیک کی وجہ سے پاکستان میں انفراسٹرکچر اور توانائی کے نظام میں بہت بہتری آئی ہے، موٹر ویز کی شکل میں عوام کو ایک نہایت عمدہ سہولت مل رہی ہے جس سے پاکستان کے اندر تجارت اور آمدورفت کے سلسلے کو مزید تقویت ملی ہے،  سی پیک کے تحت منصوبوں سے ہماری معیشت کو سپورٹ ملے گی۔ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ  حال ہی میں عالمی  بینک کی رپورٹ کے مطابق پاکستان کی 28 درجے بہتری سے عالمی سطح پر پاکستان کا مثبت تشخص اجاگر ہوا ہے اور پاکستان کاروباری آسانیوں کی فراہمی کے حوالے سے دنیا کا 108 واں ملک جبکہ کاروباری ماحول کی بہتری کے حوالے سے اقدامات کرنے والے دنیا کے 10 بڑے ممالک میں شامل ہوا ہے۔ احمد جواد نے مزید کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے وزیر اعظم عمران خان کی زیرقیادت گزشتہ ایک سال کے دوران کاروباری شعبہ کی بہتری کے حوالے سے 6 اصلاحات متعارف کروائیں جن کے نتیجہ میں پاکستان 136 ویں نمبر سے 108 ویں نمبر پر آگیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ عالمی بینک کی رپورٹ میں پاکستان کو کاروباری سہولیات کی فراہمی کے حوالے سے دنیا کے 10 بڑے ممالک میں شامل کیا جانا حکومت کی کارکردگی کی عکاسی ہے۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ سال کی رپورٹ میں دنیا کے 190 ممالک میں سے پاکستان کا 136 واں نمبر تھا جو رواں سال 28 درجے کی نمایاں بہتری سے 108 ویں نمبر پر آگیا ہے۔ احمد جواد نے کہا کہ ملک میں کاروباری سہولتوں کی فراہمی سے نہ صرف عالمی سطح پر ملک کے عزت و وقار میں اضافہ ہوا ہے بلکہ مقامی و عالمی سرمایہ کاروں کے اعتماد میں بھی اضافہ ہو گا۔ اس سے ملک میں سرمایہ کاری کے فروغ سے کاروباری و صنعتی سرگرمیاں بڑھیں گی اور بے روزگاری کی شرح کو کم کرنے میں بھی مدد ملے گی اور ملک کی اقتصادی صورتحال میں مجموعی طورپر نمایاں بہتری ہو گی۔

مزید : کامرس