اساتذہ اسلامی تعلیم عام کرنے میں اہم کردار ادا کرسکتے ہیں‘ ڈاکٹر قبلہ ایاز

  اساتذہ اسلامی تعلیم عام کرنے میں اہم کردار ادا کرسکتے ہیں‘ ڈاکٹر قبلہ ایاز

  



وہاڑی(بیورورپورٹ+نمائندہ خصوصی)چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل پروفیسر ڈاکٹر قبلہ آیاز نے کہا ہے کہ رحمتہ للعالمین حضرت محمد ؐ کی زندگی ہمارے لیے عملی نمونہ ہے آؐنے معلم کو پسندیدہ قرار دیا حدیث پاک میں ہے کہ مجھے معلم بنا کر بھیجا گیا ہے آج ریاست مدینہ کی بات کی جاتی ہے آج بھی(بقیہ نمبر52صفحہ12پر)

پاکستان میں ممکن ہے اسلام میں تعلیم ہر مرد و عورت پر فرض ہے کہ تعلیم حاصل کی جائے چاہے دنیاوی ہو اخروی تعلیم ہو دوسری امتوں میں تعلیم کو خاص لوگوں تک محدود کیا گیا تھا کسی کو تعلیم عام کرنے کی اجازت نہیں ہوتی کچھ مذاہب میں مذہبی تعلیم دینے والے کے لیے سزائیں دی جاتی تھیں خلفاء راشدین اور ان کے بعد آنے والے دور میں تعلیم کو عام آدمی کی رسائی تک کا حق دیا گیا جس کا مقصد اسلامی تعلیمات کو زیادہ سے زیادہ پھیلایا جا سکے دمشق اور عراق سمیت کئی شہروں کو تعلیمی مرکزیت کی حیثیت حاصل تھی وہاں لوگوں میں حرص تھا کہ لوگ علم کے لیے آئیں اور انہیں تعلیم دیں تاکہ وہ تعلیم کو آگے پھیلائیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمیعت اساتذہ پاکستان ضلع وہاڑی کے زیراہتمام منعقدہ سیرت النبی کانفرنس کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے مزید کہا کہ آج بھی اساتذہ اس مشن کو اپنا کر زیادہ سے زیادہ اسلامی تعلیم کو عام کرنے میں اہم کردار ادا کر سکتے ہیں آپ صلی اللہ علیہِ وآلہ وسلم کی شخصیت کا خاکہ ہی ہمارے لیے عملی نمونہ ہے سیرت النبی کانفرنس سے سی او ایجوکیشن حافظ قاسم،ظفرجمیل میؤ، صوبائی صدر عبدالخالق وٹو،پروفیسرمفتی مطیع الرحمان، حافظ محمود احمد،قاری رشید احمد وٹو نے بھی خطاب اپنے اپنے خیالات کا اظہار کیا کانفرنس میں ڈاکٹرگل ضمیرشاہ، ملک عبدالجبار ملتانی،حافظ شبیراحمد،محمدیوسف زاہدبھٹی،شیخ مہتاب،ملک فیاض ملتانی سمیت تاجروں، اساتذہ کرام، وکلاء، صحافیوں اور شہریوں کی کثیر تعداد نیشرکت کی۔

قبلہ ایاز

مزید : ملتان صفحہ آخر