کارڈیالوجی ہسپتال‘ چیک کی ٹمپرنگ‘ انکوئری رپورٹ گول مول کرنیکی کوششیں

  کارڈیالوجی ہسپتال‘ چیک کی ٹمپرنگ‘ انکوئری رپورٹ گول مول کرنیکی کوششیں

  



ملتان ( خبر نگار خصو صی) کارڈیالوجی ہسپتال ملتان میں 8 ہزار روپے کے چیک کو ٹیمپرنگ سے 74 لاکھ بنانے کا معاملہ، بنائی گئی انکوائری کمیٹی مقررہ وقت میں اپنی رپورٹ پیش نا کر سکی،(بقیہ نمبر50صفحہ12پر)

کنوینیر کمیٹی ڈاکٹر رفیق اختر نے پرسنل ہیئرنگ کے لیئے سنئیر آڈٹ آفیسر قیصر عباس اور اکاؤنٹ اسٹنٹ محمد اویس کو نوٹیفیکیشن جاری کیا، جس کی گزشتہ سے پیوستہ روز ہیرنگ ہوئی، مگر تاحال حقائق کے سامنے نا لائے جا سکے ہیں، اور نا ہی رپورٹ پیش کی جا سکی ہے، دوسری جانب کارڈیالوجی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ بینک کی جانب سے رقم کسی دوسرے اکاؤنٹ میں ٹرانسفر ہوئی جو معلوم ہونے پر فوری واپس ہمارے اکاؤنٹ میں ٹرانسفر کر دی گئی، ہماری رقم محفوظ ہے، بینک کی جانب سے بھی انکوائری کی جا رہی ہے، ہم نے بھی کمیٹی قائم کر دی ہے،جو معاملے کی چھان بین کر رہی ہے، اگر کارڈیالوجی کا کوئی شخص ملوث پایا گیا تو اس کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائے گی

چیک

مزید : ملتان صفحہ آخر