آزاد کشمیر،گلگت بلتستان میں عنقریب بڑی سرمایہ کاری کیلئے پر امید ہوں:علی امین گنڈا پور

آزاد کشمیر،گلگت بلتستان میں عنقریب بڑی سرمایہ کاری کیلئے پر امید ہوں:علی ...

  



اسلام آباد (این این آئی)وفاقی وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین خان گنڈا پورنے کہا ہے کہ وہ آزادکشمیر اور گلگت بلتستان میں مستقل قریب میں ایک بڑی سرمایہ کاری سے متعلق پرُامید ہیں جس سے اس علاقے میں ترقی وخوشحالی کے نئے دور کا آغاز ہو گا۔ وہ اسلام آباد میں آزادکشمیر اور گلگت بلتستان سے تعلق رکھنے والے وفد سے بات چیت کر رہے تھے۔وفاقی وزیرنے کہا کہ جب سے اُن کی حکومت برسر اقتدار میں آئی ہے  انہوں نے سیاحت کے شعبے کو بے پناہ توجہ دی  ہے انہوں نے کہاکہ وزیراعظم عمران خان نے ملک میں سیاحت کے شعبے کی ترقی کے حوالے سے ایک وژن رکھتے ہیں جس کی تکمیل کے لیے حکومت کوشاں ہے۔انہوں نے کہاکہ اس ضمن میں حکومت نے شفاف اور سیاح پسند پالیسیاں اپنائی ہیں انہوں نے کہاکہ ملک میں ویزا حاصل کرنے کے طریقہ کارکو آسان بنایاگیا۔وفاقی وزیر نے کہاکہ گزشتہ چند عرصہ سے قابل ذکر بین الاقوامی سرمایہ کار کمپنیوں،اداروں اور گروپس نے رابطہ کیا ہے اورمتعدد نے علاقے کا دورہ بھی کرکے وہاں سرمایہ کاری کے حوالے سے جائزہ لیا ہے جس کے نتیجے میں انہیں اُمید ہے کہ عنقریب گلگت بلتستان میں 100 ملین ڈالر تک کی سرمایہ کاری کی جائے گی۔ وفاقی وزیر نے کہاکہ حکومت بیرونی سرمایہ کاروں کی سہولیات کے لیے پالیسیوں کو مزید ساز گار بنارہی ہے جس سے بیرونی سرمایہ کاروں کو مزید تقویت ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان ٹیکس فری زون ہے جہاں سرمایہ کار ی سے بیرونی سرمایہ کار بے پناہ فائدہ اٹھا سکتے ہیں۔علی امین گنڈا پور نے کہا کہ حکومت اس کے علاوہ علاقے میں انفرسڑاکچر کی بہتری کے لیے بھی بھرپور کام کررہی ہے تمام رابطہ سڑکوں پر کام جاری ہے جن کو تمام مو سموں کے لیے قابل  استعمال بنایا جارہا ہے انہوں نے کہاکہ اس ضمن میں حکومت بابوسر ٹاپ ٹنل بنانے پر غور کررہی ہے تاکہ گلگت بلتستان کا باقی ملک سے رابطہ پورے سال بحال رکھا جاسکے۔انہوں نے کہاکہ گلگت بلتستان سکردو شاہراہ زیر تعمیر ہے اور گلگت چترال سڑک کی تعمیر علاقے میں سیاحت کی ترقی کے حوالے سے اہم سنگ میل ثابت ہوگی۔وفاقی وزیر نے وفد کو بتایا کہ سکردو ائیرپورٹ کو بھی اب گریڈکیا جارہا ہے جس کی بدولت یہاں بین الاقوامی پروازوں کو ہینڈل کیا جاسکے گااور اس سے بھی سیاحت پر بڑے مثبت اثرات مرتب ہوں گے۔انہوں نے کہاکہ سیاحت ہی ایک ایسا شعبہ ہے جس کو برق رفتاری سے ڈویلپمنٹ کیا جاسکتا ہے اور جو قومی خزانے کی آمدن بڑھانے میں اہم ثابت ہو سکتاہے۔ وفاقی وزیر نے وفد سے اپنے برطانیہ اور امریکہ کے دوروں کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ برطانیہ اور امریکہ کے دوروں کے دوران ان کی کشمیری کمیونٹی سے متعدد ملاقاتیں ہوئی جس میں کشمیری کمیونٹی نے درپیش مسائل سے آگاہ کیا۔

علی امین گنڈا پور

مزید : صفحہ آخر