گرینڈ ہیلتھ الائنس کا آج ہڑتال، آؤٹ ڈورکو مکمل بند کرنے کا اعلان 

  گرینڈ ہیلتھ الائنس کا آج ہڑتال، آؤٹ ڈورکو مکمل بند کرنے کا اعلان 

  



لاہور (جاویداقبال) گرینڈ ہیلتھ الائنس نے آج پنجاب انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی کے آؤٹ ڈور میں وکلاء  کی طرف سے ملازمین  ڈاکٹروں اور ڈسپنسر و ن کو تشدد کا نشانہ بنانے اور ان کے خلاف مقدمہ درج کرانے کے خلاف آج  احتجاج کا اعلان کردیا ہے آج ڈاکٹرز نرسز پیرا میڈیکل سٹاف کلیریکل سٹاف اور کلینیک  سٹاف مکمل ہڑتال کرے گا آؤٹ ڈور کو مکمل بند کر دیا جائے گا کوئی ڈاکٹر یا عملہ آؤٹ ڈور اور آؤٹ ڈور میں فرائض سرانجام نہیں دے گا بتایا گیا ہے  کیا ہے کہ ہفتہ کے روز آؤٹ ڈور میں پروٹوکول نہ ملنے کے پر پی آئی سی میں وکلا اور عملے کے درمیان شروع ہونے والا  پھڈا شدت اختیار کر گیا ہے  سندھو نامی  وکیل اپنے ساتھیوں کے ہمراہ آؤٹ ڈور آیا جہاں وہ اپنی فائل پر مذکور کٹیگری کی بجائے ٹائٹل کھڑکی پر کھڑا ہوگیاڈیوٹی پر موجود ڈسپنسر  انہیں بتایا کہ وہ غریب کیٹگری میں فال کرتے ہیں اس بات پر دونوں میں تکرار  شروع ہوگیا طیش میں آکر وکیلوں نے کھڑکی کے شیشے توڑ دیے اور تشدد یا ڈیوٹی ڈسپنسر پر اس دوران کے ایم ایس ڈاکٹر انوار الحق نے موقع پر پہنچ کر بیچ بچا کرا دیا اور دونوں فریقوں میں صلح کرا دی صلح کرنے کے فوری بعد وکلاء   نے اپنے درجنوں ساتھیوں وہ ہسپتال بلالیا اور ہسپتال کے عملے پر حملہ آور ہو گئے اس دوران ہسپتال کے عملے کا ساتھ موقع پر موجود مریضوں اور ان کے لواحقین نے بھی ساتھ دیا مارکٹائی میں وکلا اور ہسپتال کے عملہ کے کئی لوگ زخمی ہوگئے جس کے بعد وکلاء  نے جیل روڈ کو بند کر دیا اور احتجاج شروع کردیا اور اس کے فوری بعد وکلائجن کی تعداد درجنوں میں تھی وہ تھانے پہنچ گئے اور سرکاری ہسپتال کے سرکاری لوگوں کے خلاف مقدمہ درج کرادیا  اطلاع ملنے پر ہسپتالک عملہ بھی تھانے پہنچ گیا اور وکلائکے خلاف درخواست دی  کہ انہوں نے ہسپتال پر حملہ کیا ہے درجنوں کمپیوٹر کڑکیاں توڑدی ہیں مگر ان کی درخواست کو پولیس نے نظر انداز کردیا اس حوالے سے گرینڈ ہیلتھ  الائنس  کے چیئرمین ڈاکٹر عرفان سے بات کی گئی تو انہوں نے کہا کہ آج  آوٹ دور مکمل بند کیا جائے گا پی ای سی میں مکمل ہڑتال ہوگی وکلاء  نے زبردست زیادتی کی ہے جس کے خلاف آج ہم احتجاج کریں گے انہوں نے کہا کہ آج ہم مطالبہ کریں گے کہ جن وکلائنے ہسپتال اور ان کے ملازمین پر حملہ کیا ان کے خلاف مقدمہ درج کیا جائے اسپتال کو سیکیور  فورن قراردیا جائے انہوں نے کہا کہ ہم اعلان کرتے ہیں کہ اگر وکلاء  کے خلاف کارروائی نہ کی گئی تو ہم کالے کوٹ والوں کا نہ علاج کریں گے اور نہ انہیں کسی ہسپتال میں گھسنے دیں گے بلکہ وکلاء  کا بائیکاٹ ہوگا علاج معالجے کے حوالے سے اور یہ اور اس فیصلے کا اطلاق تمام ہسپتالوں پر ہوگا انہوں نے کہا کہ پی آئی سی کی سرکاری عمارت پر حملہ کر کے وکلائنے لاکھوں روپے کا سامان توڑ دیا ڈاکٹروں اور نرسوں اور دیگر سٹاف کو زدوکوب کیا جس کا پولیس نے آج تک مقدمہ درج نہیں کیا انہوں نے کہا کہ آج ہم پریس کانفرنس بھی کریں گے جس میں آئندہ لائحہ عمل کا اعلان کیا جائے گا 

پی آئی سی احتجاج

مزید : صفحہ اول