مغربی ممالک اسلامو فوبیا کی لہر روکنے کیلئے اقدامات کریں،شاہ اویس نورانی

  مغربی ممالک اسلامو فوبیا کی لہر روکنے کیلئے اقدامات کریں،شاہ اویس نورانی

  



لاہور (سٹی رپورٹر)جمعیت علماء پاکستان کے مرکزی سیکریٹری جنرل شاہ محمد اویس نورانی نے کہا ہے کہ ناروے میں قرآن مجید کی بے حرمتی کا واقعہ اسلام دشمن عمل ہے۔ مغربی ممالک میں مسلمانوں کو انتہا پسندانہ رویوں کا سامنا ہے۔ مغربی ممالک اسلامو فوبیا کی لہر کو روکنے کے لئے اقدامات کریں۔ عمران خان سانحہ ناروے پر کیوں خاموش ہے۔ مسلمانوں کو انتہا پسند قرار دینے والوں کی آنکھیں سانحہ ناروے سے کھل جانی چاہئیں۔ مغرب میں مسلمان عدم تحفظ کا شکار ہیں۔ ناروے میں قرآن مجید جلانے کے سانحہ سے دنیا بھر کے مسلمانوں کے جذبات مجروح ہوئے ہیں۔

 ناروے کی حکومت قرآن کی بے حرمتی کا ارتکاب کرنے والے انتہا پسند کو سخت ترین سزا دے۔ ثابت ہو گیا ہے کہ انتہا پسند ہر مذہب میں موجود ہیں۔ پاکستانی حکومت نے ناروے کے دردناک واقعہ پر زوردار آواز اٹھائے۔ ناروے کے سفیر کو دفتر خارجہ میں طلب کر کے قرآن جلانے کے واقعہ پر اسلامیان پاکستان کے جذبات سے آگاہ کیا جائے۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے جے یو پی کے ہنگامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ صاحبزادہ شاہ اویس نورانی نے مزید کہا کہ ناروے کے سانحہ نے اسلامیان عالم کے دلوں کو زخمی کیا ہے۔ قرآن جلانے والے شخص کو دینا کا سب سے بڑا دہشت گرد قرار دیا جائے۔ اسلام محبت و اخوت کا دین ہے۔ اسلام دہشت گردی نہیں رواداری کا درس دیتا ہے۔ مغرب میں مسلمانوں اور اسلام کے خلاف نفرت پھیلانے والے انسانیت اور امن کے دشمن ہیں۔ ناروے میں شرپسندی کا واقعہ امن دشمنی اور شدت پسندی کی بدترین مثال ہے#/s#

مزید : میٹروپولیٹن 1