لوئر دیرمیں سیاسی جماعتوں نے بجلی بلوں میں ٹیکسوں کا نفاذ مسترد کر دیا

لوئر دیرمیں سیاسی جماعتوں نے بجلی بلوں میں ٹیکسوں کا نفاذ مسترد کر دیا

  



 تیمرگرہ (آن لائن )  لوئر دیر کی  سیاسی جماعتوں جماعت اسلامی،پیپلز پارٹی، عوامی نیشنل پارٹی، مسلم لیگ ن اورجمعیت علماء اسلام نے بجلی کی بلوں میں ٹیکسوں کی نفاذ کو مسترد کر دیا ملاکنڈ ڈویژن فری ٹیکس زون ہے بجلی بلوں میں ٹیکس وصولی نا انصافی اورظلم ہے بجلی کے بلوں میں ٹیکسوں کی وصولی کے خلاف عدالت جانے کا اعلان تفصیلات کے مطابق جماعت اسلامی کے امیر ازازلملک افکاری، عوامی نیشنل پارٹی لوئر دیر کے جنر ل سیکرٹری ملک محمد زیب خان، پیپلز پارٹی کے ڈاکٹر محمد امین خان، اور جمیعت علماء اسلام لوئر دیر کے امیر سراج الدین نے بجلی کی بلوں میں گزشتہ دو مہنیوں سے ٹیکس نفاذ پر شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اسے مسترد کر دیا ہے انھوں نے کہا کہ ملاکنڈ ڈویژن فری ٹیکس زون ہے لیکن اس کے باوجود بجلی کے بلوں میں مسلسل مختلف قسم کے ٹیکس شامل کئے جاتے ہیں انھوں نے کہا کہ بجلی کی قمتیں پہلے سے زیادہ ہے عوام اپنے بلوں کو داخل ہونے کے متحمل نہیں ہوسکتے لیکن بجلی بلوں میں اضافہ بوجھ عوام پر ڈال دیا جاتا ہے پیپلز پارٹی کے رہنما ڈاکٹر محمد امین خان نے اعلان کیا کہ بجلی  کے بلوں میں ٹیکس نفاذ کے خلاف وہ عدالت سے رجوع کرینگے انھوں نے مطالبہ کیا کہ بجلی بلوں میں اضافہ اور نار واٹیکس واپس لیا جائے بصورت دیگر عوام بجلی کے بلزاحتجاجا داخل نہیں کر ینگے جس کی تمام تر زمہ داری محکمہ واپڈا حکام پر عائد ہوگی۔ 

لوئر دیر

مزید : علاقائی