شعبہ صحت پر خصوصی توجہ دی جا رہی ہے:ڈاکٹر ہشام انعام اللہ

شعبہ صحت پر خصوصی توجہ دی جا رہی ہے:ڈاکٹر ہشام انعام اللہ

  



پشاور (سٹاف رپورٹر)خیبر پختونخوا کے وزیر صحت ہشام انعام اللہ خان نے کہا ہے کہ صحت کے شعبے میں اصلاحات کو موثر طور پر لاگو کرنے کے لیے باریک بینی سے توجہ دی جائے گی ہیلتھ سروس ڈیلیوری کو بہتر اور بلند پایہ بنانا حکومت کی ترجیح ہے۔وزیر صحت ڈاکٹر ہشام انعام اللہ خان کی زیر صدارت سپیشل بورڈ آف آربیٹریشن کا دوسرا اجلاس محکمہ صحت کے کمیٹی روم میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں سپیشل سیکرٹری ہیلتھ ڈاکٹر جمیل فاروق اور بورڈ ممبران ریٹائرڈ جسٹس قلندر علی خان، ریٹائرڈ جسٹس محمد غضنفرخان، ریٹائرڈ جسٹس نثار حسین خان۔سابق ہائی کورٹ جج و وکیل سردار شوکت حیات،سابق جج محمد ایوب خان، ایڈووکیٹ سپریم کورٹ محمد جہانزیب محمد زئی اور ایڈوکیٹ سپریم کورٹ عامر جاویدنے شرکت کی جبکہ بورڈ کی درخواست پر ایڈووکیٹ سپریم کورٹ علی رضا بھی اجلاس میں خصوصی طور پر شریک ہوئے۔  بورڈ آف آربیٹریشن کے اجلاس میں میڈیکل ٹیچنگ انسٹیٹیوٹ ایکٹ،ریجنل ہیلتھ اتھارٹیز اور ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹیز,محکمہ صحت کے ملازمین بشمول ڈاکٹرز, پیرامیڈیکس اور نرسز کے لیے قوانین اور قواعد و ضوابط میں مزید بہتری لانے کیلئے تفصیلی غور وحوض کیا گیا۔ وزیر صحت نے کہا کہ اجلاس کا مقصد محکمہ صحت قواعد و ضوابط میں بہتری لانا ہے اور موجودہ قواعد و ضوابط میں قانونی پیچیدگیوں اور خامیوں کو دور کرنا ہے تاکہ نہ صرف اس ہیلتھ سروس ڈیلیوری اچھی بنائی جائے بلکہ تیز تر انصاف اور ٹرائیل بھی ممکن ہو سکے۔ 

مزید : پشاورصفحہ آخر