’وہ انٹرنیٹ پر میری جیسی کنواری لڑکیاں ڈھونڈ کر اُنہیں استری سے جلاتا تھا‘ اداکارہ کی انتہائی دردناک کہانی

’وہ انٹرنیٹ پر میری جیسی کنواری لڑکیاں ڈھونڈ کر اُنہیں استری سے جلاتا تھا‘ ...
’وہ انٹرنیٹ پر میری جیسی کنواری لڑکیاں ڈھونڈ کر اُنہیں استری سے جلاتا تھا‘ اداکارہ کی انتہائی دردناک کہانی

  



نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک)امریکہ میں ایک سال ایک بدنام زمانہ گروپ پکڑا گیا تھا جس لیڈر کم عمر لڑکیوں کو ورغلاکر گروپ میں شامل کرتا اور پھرانہیں جنسی زیادتی کا نشانہ بناتا تھا۔اس شخص کی بربریت کاشکار ہونے والی ایک ہالی ووڈ اداکارہ نے اب اپنی دکھ بھری داستان دنیاکوسنا دی ہے۔

دی مرر کے مطابق ساراایڈمنڈسن نامی اس اداکارہ نے بتایا کہ میں ان دنوں ہالی ووڈ میں نووارد تھی اور بہتر رول کی تلاش میں تھی۔ چنانچہ میں بھی اس گروپ کی رکن بن گئی کیونکہ ہالی ووڈ کی کئی شخصیات اس گروپ کی رکن تھیں اور مجھے امید تھی کہ اس گروپ کی رکن بننے سے مجھے ہالی ووڈ میں بہتر کام ملنے لگے گا لیکن میرا اندازہ غلط ثابت ہوا اور میں وہاں ایک جنسی غلام بن کر 10سال تک رہنے پر مجبور ہو گئی۔“

سارا کا کہنا تھا کہ ”این ایکس آئی وی ایم نامی اس گروپ کے لیڈر کیتھ رینئر نے پہلے دن ہی مجھے برہنہ کرکے ایک میز پر لٹا دیا اور میرے جسم پر گرم استری سے اپنے نام کا پہلا حرف Kکندہ کر دیا۔ جب وہ میرے جسم کو استری سے جلا رہا تھا تو میں درد سے چیخ رہی تھی۔ میرے جسم پر Kلکھنے کے بعد اس نے کہا کہ اب تم میری ملکیت ہو۔ چند دنوں بعد ہی اس نے مجھے کہا کہ ڈیٹنگ ایپلی کیشن ٹنڈر اور دیگر سوشل میڈیا پلیٹ فارمز کے ذریعے نوعمر اور خوبصورت لڑکیوں کو گروپ میں شامل کرو۔ وہ ہرنئی لڑکی کو اسی طرح استری سے جلاتا اور ان کے جسم پر Kلکھتا اور پھر انہیں جنسی زیادتی کا نشانہ بناتا تھا۔“واضح رہے کہ کیتھ رینیئر کے خلاف عدالت میں جنسی جرائم ثابت ہو چکے ہیں اور وہ جیل میں سزا سنائے جانے کا انتظار کر رہا ہے۔

مزید : تفریح