اسرائیل کے وزیراعظم نے کس اسلامی ملک کے دورے کا اعلان کر دیا؟

اسرائیل کے وزیراعظم نے کس اسلامی ملک کے دورے کا اعلان کر دیا؟
اسرائیل کے وزیراعظم نے کس اسلامی ملک کے دورے کا اعلان کر دیا؟

  

تل ابیب (ویب ڈیسک) اسرائیل کے وزیراعظم نیتن یاہو نے اعلان کیا ہے کہ وہ بہت جلد بحرین کا دورہ کریں گے۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس میں بتایا جارہا ہے کہ نیتین یاہو کا کہنا ہے کہ وہ بہت جلد بحرین کا دورہ کریں گے۔ نیتن یاہو نے کہا ہے کہ ان کی بحرین کے کراؤن پرنس سے سلمان بن حماد ال خلیفہ سے ٹیلی فون پر بات چیت ہوئی ہے جو نہایت دوستانہ تھی۔بحرین کے کراؤن پرنس سلمان بن حماد آل خلیفہ اس وقت وزیراعظم بھی ہیں۔

وہ اس منصب پر بحرین کے سابق وزیر اعظم شیخ خلیفہ بن سلمان ال خلیفہ کے 84 برس کی عمر میں انتقال کے بعد فائز ہوئے۔

واضح رہے کہ ایک روز قبل اسرائیلی وزیراعظم بینجمن نیتن یاہو اور سعودی عرب کے ولی عہد محمد بن سلمان کے درمیان خفیہ ملاقات کا انکشاف ہوا تھا۔

بعدازاں ریاض سے جاری ایک بیان میں سعودی وزیر خارجہ فیصل بن فرحان نے کہا تھا کہ سعودی ولی عہد سے اسرائیلی حکام کی ملاقات کی خبروں میں کوئی صداقت نہیں۔

دوسری جانب اسرائیلی وزیراعظم بینجمن نیتن یاہو نے اپنے دورہ سعودی عرب کی خبر پر تبصرے سے گریز کیا۔

خیال رہے کہ گزشتہ ماہ اسرائیل اور بحرین نے ایک معاہدے پر دستخط کرکے باضابطہ سفارتی تعلقات کا آغاز کردیا۔ اس طرح ایران میں اسلامی انقلاب کے بعد بحرین اسرائیل کے ساتھ امن کی طرف بڑھنے والا چوتھا عرب ملک بن گیا ہے۔

بحرین کے دارالحکومت منامہ میں اسرائیلی اور امریکی عہدیداروں کے وفد کے دورے کے بعد اس معاہدے پر دستخط ہوئے۔

اس سے قبل بحرین کے وزیر خارجہ نے اسرائیل اور متحدہ عرب امارات کے مابین ’ابراہیم معاہدے‘ پر دستخط کے دوران امریکہ کا دورہ کیا تھا۔

تعلقات کو معمول پر لانے کے علاوہ اس معاہدے سے مختلف معاملات پر دوطرفہ تعاون کو وسعت ملتی ہے۔اس معاہدے میں دونوں ممالک کے درمیان رسمی اور سفارتی تعلقات پر زیادہ توجہ دی گئی ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -