کیا پاکستان پر اسرائیل کو تسلیم کرنے کا دباﺅ ہے ؟ صحافی کے سوال پر وزیراعظم نے دو ٹوک جواب دے دیا

کیا پاکستان پر اسرائیل کو تسلیم کرنے کا دباﺅ ہے ؟ صحافی کے سوال پر وزیراعظم ...
کیا پاکستان پر اسرائیل کو تسلیم کرنے کا دباﺅ ہے ؟ صحافی کے سوال پر وزیراعظم نے دو ٹوک جواب دے دیا

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )وزیراعظم عمران خان نے کہاہے کہ ہمیں سب سے بڑی کامیابیاں خارجہ پالیسی میں حاصل ہوئی ہیں ،آج امریکہ بھی پاکستان کی تعریف کر رہا ہے۔لاہور میں میڈ یا سے گفتگو کے دوران صحافی نے وزیراعظم سے سوال کیاکہ جس طرح متحدہ عرب امارات کے اسرائیل کوتسلیم کر رہا ہے ،پاکستان اس حوالے سے کیا سوچ رہا ہے ؟۔اس پر جواب دیتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ کچھ سالوں پہلے پاکستان کے بجائے بھارت کو دنیا میں اچھا ملک سمجھا جا رہا تھا لیکن آج دنیا میں ہم نے بھارت کو بے نقاب کیا ہے ،آج دنیا پاکستان کے ساتھ کھڑی ہے ۔پاکستان نے افغان امن عمل میں جو کردار ادا کیا پوری دنیا نے اس کی تعریف کی ،ہم نے امریکہ اور طالبان کے مذاکرات کرائے ۔ان کا کہنا تھا کہ ترکی ،ایران ،سعودی عرب اور متحدہ عرب اما رات سے ہمارے تعلقات اچھے ہیں ،قائد اعظم کا ایک موقف تھا کہ جب تک فلسطین کو انصاف نہیں ملے گا ہم اسرائیل کو تسلیم نہیں کریں گے ،پاکستان آج بھی اسی موقف پر کھڑا ہے ،ہمیں اسرائیل کو تسلیم کرنے کے لیے کسی قسم کا دباﺅ نہیں تھا ۔

مزید :

قومی -