علی موسی گیلانی کی گرفتاری ، بلاول بھٹو بھی میدان میں آگئے

علی موسی گیلانی کی گرفتاری ، بلاول بھٹو بھی میدان میں آگئے
علی موسی گیلانی کی گرفتاری ، بلاول بھٹو بھی میدان میں آگئے

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کے صاحبزادے علی موسی گیلانی کی گرفتاری کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ علی موسی گیلانی کی گرفتاری سلیکٹڈ حکمرانوں کی غنڈہ گردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق علی موسی گیلانی کی گرفتاری پر مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پی ڈی ایم ملتان جلسے کے حوالے سے سرگرم علی موسٰی گیلانی کی گرفتاری اظہار ہے کہ حکومت بوکھلاگئی، یہ جان چکے ہیں کہ عوام سلیکٹڈ نہیں بلکہ جمہوریت کے ساتھ ہیں، یہ اوچھے ہتھکنڈے ہماری راہ میں رکاوٹ نہیں بن سکتے، احتجاج ہمارا جمہوری حق ہے اور 30نومبر کو جو بھی ہو، ہم یہ حق حاصل کرکے رہیں گے۔انہوں نے کہا کہ دھاندلی کی پیداوار حکومت اب عوامی تحریک کو طاقت سے دبانا چاہتی ہے،حکومت مخالف احتجاج کو اوچھے ہتھکنڈوں سے روکنے کی توقع رکھنے والوں کو منہ کی کھانی پڑے گی،پرامن سیاسی سرگرمیاں اور احتجاج عوام کا حق ہے، انہیں روکنا آئین کی خلاف ورزی ہے۔ بلاول بھٹو زرداری نے مطالبہ کیا کہ  علی موسی گیلانی کو فوری  رہا کیا جائے۔

واضح رہے کہ ملتان پولیس نے سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کے بیٹے و پیپلزپارٹی کے رہنما علی موسیٰ گیلانی کو پابندی کے باوجود ریلی نکالنے پر مقدمہ درج کرتے ہوئے چار ساتھیوں سمیت گرفتار کر کے حوالات میں بند کردیا ہے۔پولیس کے مطابق حکومت پنجاب کی جانب سے کورونا کے باعث ریلیوں پر پابندی تھی لیکن علی موسیٰ گیلانی کے خلاف پابندی کے باوجود ریلی نکالنے پرپیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن کے 30 رہنماؤں نامزد اور 50 نامعلوم کارکنوں کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا۔ایف آئی آر میں عبدالقادرگیلانی، علی موسیٰ گیلانی اور ایم پی اے علی قاسم گیلانی نامزد ہیں تاہم علی موسی گیلانی اور دیگر چار ساتھیوں کو باقاعدہ گرفتار کرلیا گیا ہے۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -