جمعیت کا قاری الیاس کے قاتلوں کو جلد گرفتار کرنے کا مطالبہ 

  جمعیت کا قاری الیاس کے قاتلوں کو جلد گرفتار کرنے کا مطالبہ 

  

باجوڑ (نمائندہ خصوصی)  حکومت جمعیت علمائے اسلام اور جرگہ ممبران کے ساتھ کیے گئے وعدوں پر عملدرآمد کریں۔ 10 دن کے اندر قاتلوں کو گرفتار کریں بصورت دیگر ہم پورے قبائل سمیت پشاور میں بھی نہ ختم ہونے والا دھرنا دیں گے۔ انتظامیہ علمائے کرام کی سیکورٹی یقینی بنائیں۔ ان خیالات کا اظہار جمعیت علمائے اسلام فاٹا کے امیر ایم این اے مفتی عبدالشکور، ڈپٹی سیکرٹری الحاج احمد سعید، جے یو آئی خار سب ڈویژن کے نامزد امیدوار حاجی سید بادشاہ نے باجوڑ پریس کلب خار میں ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ان کے ہمراہ ترجمان جے یو آئی فاٹا قاری جہاد شاہ، فرہاد علی،  مفتی فضل محسن، حاجی امیر جان، حاجی نعیم اللہ جان بھی موجود تھے۔ انہوں نے کہا کہ قاری الیاس کے قاتل وہ نہیں جنہوں نے ان پر گولیاں چلائی بلکہ وہ ہے جنہوں نے بار بار مطالبے کے باوجود سیکورٹی دینے میں غفلت بھرتی۔ انہوں نے کہا کہ باجوڑ کا سب سے بڑا مسئلہ امن ہے۔ پولیس اہلکار ڈی پی او اور منتخب نمائندگان کے ذاتی خدمت میں مصروف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میں باجوڑ کے تمام قوم، جمعیت علمائے اسلام کے کارکنوں اور تمام دھرنا شرکاء کا مشکور ہوں جنہوں نے دو روزہ دھرنے میں قومی املاک ایک پائی کا نقصان نہیں پہنچایا۔  انہوں نے کہا کہ حکومت جمعیت علمائے اسلام اور جرگہ ممبران کے ساتھ کیے گئے وعدوں پر عملدرآمد کریں۔ 10 دن کے اندر قاتلوں کو گرفتار کریں بصورت دیگر ہم پورے قبائل سمیت پشاور میں بھی نہ ختم ہونے والا دھرنا دیں گے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -