بھارت میں انسانی حقوق پامال، عالمی برادری بغض پاکستان سے بڑھ کر سوچے: اعجاز عالم آگسٹن 

بھارت میں انسانی حقوق پامال، عالمی برادری بغض پاکستان سے بڑھ کر سوچے: اعجاز ...

  

   ملتان (وقائع نگار)وزیر انسانی حقوق و اقلیتی امور اعجاز عالم آگسٹن نے بین المذاھب ہم آہنگی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاہے کہ پاکستان میں تمام مذاہب کے پیروکار آزاد ہیں۔ریاست تمام اقلیتوں کے حقوق کا تحفظ یقینی بنا رہی ہے۔آج کا پاکستان اقلیتوں کیلئے محفوظ ملک ہے۔انہوں نے کہا کہ بین المذاہب ہم آہنگی کونسل کا کردار آج کے دور میں بہت اہم ہے۔میثاق مدینہ بین المذاہب ہم(بقیہ نمبر45صفحہ6پر)

 آہنگی کی شاندار مثال ہے۔ہمارے ہمسایہ ملک بھارت میں سب زیادہ انسانی حقوق پامال کئے جارہے ہیں۔کشمیر جنت نظیر کو بدترین جیل میں تبدیل کر دیا گیا ہے۔ عالمی برادری کو بغض پاکستان سے آگے بڑھ کر سوچنا چاہیے۔ بھارت میں آئے دن اقلیتوں پر ظلم و ستم کے پہاڑ توڑے جاتے ہیں اور روز نت نئے دلخراش واقعات رونما ہوتے ہیں۔انہوں نے کہا پاکستان نے دہشت گردی کے خاتمے کے لئے بہت قربانیاں دی ہیں۔کسی بھی واقعہ کے بعد ریاست کا رویہ اہمیت کا حامل ہوتا ہے۔کمشنر ملتان ڈویژن ڈاکٹر ارشاد احمد نے کہا کہ نسل نو کی بقا کیلئے بین المذاہب ہم آہنگی کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔کوآرڈینیٹر جنوبی پنجاب برائے وزارت انسانی حقوق و اقلیتی امور قربان فاطمہ نے کہا کہ بین المذاہب ہم آہنگی کونسلز کے ذریعے پر امن معاشرے کو فروغ ملے گا۔ایگزیکٹو ڈائیریکٹر ایس ڈی آئی شاہد ندیم نے کہا کہ ابتدا میں 5یونین کونسلوں میں بین المذاہب ہم آہنگی کونسلیں بنائی جائیں گی۔ 

اعجاز عالم آگسٹن

مزید :

ملتان صفحہ آخر -